تازہ ترین
  • بریکنگ :- الیکٹرانک ووٹنگ مشین کےاستعمال کےحوالےسےاہم پیشرفت
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن کےخط کےبعدحکومت کاالیکشن کمیشن سےرابطہ
  • بریکنگ :- چیف الیکشن کمشنرکی ڈپٹی چیئرمین پلاننگ کمیشن سےملاقات،ذرائع
  • بریکنگ :- ملاقات میں سیکرٹری الیکشن کمیشن بھی موجودتھے،ذرائع
  • بریکنگ :- الیکٹرانک ووٹنگ مشین اسٹوررومزکےحوالےسےبات چیت،ذرائع
  • بریکنگ :- ای وی ایم اسٹوررومزکیلئےمختلف مقامات کےحوالےسےگفتگوکی گئی
  • بریکنگ :- ایک ارب 20 کروڑکی لاگت سےفیلڈدفاترکی تعمیرپربات چیت،ذرائع
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن کی ڈیٹابیس اسٹوریج سےمتعلق معاملات پربات چیت،ذرائع
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن کاپروجیکٹ مینجمنٹ کیلئے 20افرادبھرتی کرنےکافیصلہ،ذرائع
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن کی ای وی ایم اسٹوریج کیلئےجگہ دینےکی منظوری،ذرائع
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن کی ڈپارٹمنٹل ڈیویلپمنٹ ورکنگ پارٹی نےمنظوری دی،ذرائع
  • بریکنگ :- ای وی ایم اسٹوریج کیلئے 2کروڑ 23لاکھ روپےکی منظوری دےدی،ذرائع
  • بریکنگ :- عمارت کیلئےپلاننگ کمیشن نےرقم کی منظوری نہیں دی،ذرائع
  • بریکنگ :- پلاننگ کمیشن کی جنوری،فروری میں اسٹوریج منصوبےکی منظوری دلانے کی یقین دہانی
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن کےمنصوبےکی این ای سی میں حمایت کریں گے،پلاننگ کمیشن
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن کو 3سے 4لاکھ الیکٹرانک ووٹنگ مشینوں کواسٹورکرناہوگا،ذرائع
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن کےپنجاب میں فیلڈدفاترکیلئےفنڈزکی منظوری نہ ہوسکی،ذرائع

معروف گائیک اعجاز قیصر کی فیصل آباد کے مقامی قبرستان میں تدفین کر دی گئی

Last Updated On 27 May,2020 09:49 am

فیصل آباد: (دنیا نیوز) صدارتی ایوارڈ یافتہ معروف گائیک اعجاز قیصر کی تدفین فیصل آباد کے مقامی قبرستان میں ادا کر دی گئی، نماز جنازہ میں سماجی اور گلوکار گھرانے سے تعلق رکھنے والے سینکڑوں افراد نے شرکت کی۔

فیصل آباد میں صدراتی ایوراڈ یافتہ گائیک اعجاز قیصر گزشتہ روز انتقال کر گئے تھے، اعجاز قیصر ذیابیطس، دل اور گردوں کے عارضے میں مبتلا تھے۔ گزشتہ روز اعجاز قیصر کو طعبیت ناساز ہونے پر ہپستال منتقل کیا گیا مگر وہ جانبر نہ ہو سکے۔

اعجاز قیصر پاکستان ٹیلی وژن سے غزل گائیگی کے پروگراموں سے شہرت حاصل کی تھی، اعجاز قیصر کی نماز جنازہ کے بعد قریبی قبرستان میں تدفین کر دی گئی، ان کے بچھڑنے پر ہر آنکھ اشک بار نظر آئی۔

اعجاز قیصر کی نماز جنازہ میں حسن صادق، شرافت علی، علی شیر اور امانت علی نے بھی شرکت کی۔ حسن صادق کا کہنا تھا کہ غزل کی دنیا کا ایک بڑا نام اس دنیا سے چلا گیا، امانت علی کا کہنا تھا کہ اعجاز قیصر موسیقی میں میرے استاد تھے۔ اعجاز قیصر کے جانے سے خاندان اور موسیقی کی دنیا میں خلا پیدا ہو گیا ہے۔