تازہ ترین
  • بریکنگ :- کوئٹہ:وزیراعلیٰ بلوچستان کی زیرصدارت ایپکس کمیٹی کا اجلاس
  • بریکنگ :- کوئٹہ:لیفٹیننٹ جنرل سرفرازعلی ،ڈپٹی اسپیکرقومی اسمبلی کی شرکت
  • بریکنگ :- کوئٹہ:چیف سیکرٹری بلوچستان اور پلاننگ کمیشن حکام کی شرکت
  • بریکنگ :- کوئٹہ:شرکاکو پیکج میں شامل منصوبوں کی پیشرفت پر بریفنگ
  • بریکنگ :- پیکج میں مختلف سیکٹرز کے 122 منصوبے شامل ہیں،بریفنگ
  • بریکنگ :- کوئٹہ:اجلاس میں پیکج پر عملدرآمد کی رفتار تیز کرنے کیلئےفیصلے
  • بریکنگ :- کوئٹہ:منصوبوں کی مانیٹرنگ کیلئے کمیٹیاں تشکیل دی جائیں گی
  • بریکنگ :- وفاقی سیکرٹری پلاننگ کی سربراہی میں کمیٹیاں تشکیل دی جائیں گی
  • بریکنگ :- چیف سیکرٹری بلوچستان کی سربراہی میں بھی کمیٹیاں تشکیل دی جائیں گی،فیصلہ
  • بریکنگ :- منصوبوں میں حائل رکاوٹوں کو جلددورکیا جائےگا،اجلاس میں فیصلہ
  • بریکنگ :- منصوبےجلدمکمل کرکےعوام تک ان کےثمرات پہنچائےجائیں،وزیراعلیٰ کی ہدایت
  • بریکنگ :- وزیراعظم کی بلوچستان کی ترقی سےمتعلق دلچسپی حوصلہ افزاہے،وزیراعلیٰ بلوچستان
  • بریکنگ :- وزیراعظم شمالی بلوچستان پیکج کا جلد اعلان کریں گے،وزیراعلیٰ بلوچستان

یاسین ملک کی رہائی کیلئے انڈیا پر دباؤ ڈالا جائے، پاکستان کا یو این سے مطالبہ

Published On 21 January,2021 04:54 pm

نیویارک: (دنیا نیوز) پاکستان نے اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوتریش پر زور دیا ہے کہ وہ نئی دہلی کی تہاڑ جیل میں قید شدید بیمار جموں کشمیر لبریشن فرنٹ کے چیئرمین محمد یاسین ملک کی رہائی کے لیے بھارت پر دبائو ڈالیں اور اپنا اثرورسوخ استعمال کریں۔

اقوام متحدہ میں پاکستان کے مستقل مندوب منیر اکرم نے اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کے نام جاری خط میں حریت رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک کی اپنے شوہر کی رہائی کی اپیل بھی منسلک کرتے ہوئے کہا کہ مناسب عمل اور حفاظتی اقدامات کے بغیر بھارت کے ظالمانہ قبضے، طاقتوں، قوانین اور طریقہ کار میں زندگی گزارنے اور بھارتی قبضے کے خلاف مزاحمت کرنے والے کشمیریوں اور سیاسی رہنمائوں پر بھارتی مظالم ان کے بنیادی انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزی ہیں۔

خط میں مشعال ملک نے کہا کہ بھارتی قید میں حریت رہنما یاسین ملک کی صحت بہت خراب ہے اور مسلسل جسمانی اور ذہنی تشددسے ان کی حالت بہت خراب ہو گئی ہے۔

پاکستانی مندوب منیر اکرم نے سیکرٹری جنرل کو اپنے گزشتہ خط سے متعلق یاد دہانی کرائی جس میں انہوں نے بھارت میں کشمیری سیاسی کارکن آسیہ اندرابی کی 2016ء سے مسلسل قید کی طرف توجہ دلائی۔

انہوں نے خط کے ساتھ پاکستانی پارلیمنٹ کے ایوان بالا کی منظور کردہ قرارداد بھی منسلک کی ہے جس میں کہا گیا کہ پاکستانی حکومت اقوام متحدہ کی مدد سے بھارت کے زیر تسلط مقبوضہ جموں کشمیر میں حریت رہنما یاسین ملک اور دیگر سیاسی رہنمائوں کی غیر قانونی بھارتی قید سے رہائی کے لیے کوششیں کرے۔

پاکستانی مندوب نے نشاندہی کی کہ اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کے ہائی کمشنر ، خصوصی رپورٹرز اور بین الاقوامی تنظیموں ایمنسٹی انٹرنیشنل، ہیومن رائٹس واچ نے بار بار بھارت سے مطالبہ کیا کہ وہ اپنے ظالمانہ قوانین کو منسوخ کریں جنہیں بھارتی فوجی سیاسی رہنمائوں کو غیر قانونی طور پر قید کرنے کے لیے استعمال کرتے ہیں اور یہی نہیں بھارتی حکام نے قانون کی حکمرانی کے بنیادی اصولوں کا مذاق اڑایا ہے اور کشمیریوں کے منصفانہ مقدمے کے حق اور کارروائی کو بھی مجروح کیا ہے۔

پاکستانی مندوب منیر اکرم نے سیکرٹری جنرل سے درخواست کی کہ وہ ان حالات کے تناظر میں حریت رہنما یاسین ملک کی غیرقانونی قید سے فوری رہائی کے لیے بھارت پر زور ڈالیں اور اپنا اثرورسوخ استعمال کریں۔