تازہ ترین
  • بریکنگ :- وزیراعظم کانوجوانوں کیلئےمفت ہائی ٹیک کورسزکا منصوبہ
  • بریکنگ :- ‏کامیاب جوان "اسکلزفارآل"پروگرام کےتیسرےمرحلےکاآغاز
  • بریکنگ :- 60 ہزارنوجوانوں کیلئےرجسٹریشن اوپن کردی گئی
  • بریکنگ :- ایک ہزاراعلیٰ تعلیمی اداروں میں 60 ہزاراسکلزاسکالرشپ مختص،عثمان ڈار
  • بریکنگ :- 16 جنوری سےرجسٹریشن کاآغازکردیاگیا،معاون خصوصی عثمان ڈار
  • بریکنگ :- رجسٹریشن کی آخری تاریخ 31 جنوری 2022 ہے،عثمان ڈار

پی پی 84: ضمنی الیکشن، پولنگ جاری، ن لیگ اور پی ٹی آئی میں سخت مقابلہ متوقع

Published On 05 May,2021 08:35 am

لاہور: (دنیا نیوز) پی پی 84 خوشاب میں ضمنی الیکشن کیلئے پولنگ کا عمل جاری ہے۔ شام پانچ بجے تک ووٹ کاسٹ کرنے کی سہولت ہوگی۔ مسلم لیگ نون کے معظم شیر اور پی ٹی آئی کے علی حسنین میں کانٹے کا مقابلہ متوقع ہے۔

 پنجاب اسمبلی کے حلقہ 84 خوشاب میں ضمنی الیکشن کے دوران 2 ہزار 880 پولیس اہلکار اور رینجرز کے 600 جوان سیکیورٹی پر مامور ہیں۔ حلقے میں 229 پولنگ سٹیشن قائم کئے گئے ہیں جن میں سے 14 کو حساس قرار دیا گیا ہے۔ حلقے میں ووٹرزکی کل تعداد 2 لاکھ 92 ہزار 687 ہے۔ یاد رہے یہ سیٹ ن لیگ کے وارث کلو کی وفات کے باعث خالی ہوئی تھی۔

 ادھر خوشاب پی پی 84 جمالی بلوچاں کے پولنگ سٹیشن میں غلط ووٹ کا الزام لگا کر مسلم لیگ ن کے کارکن کو پی ٹی آئی کے کارکنوں نے ووٹ کاسٹ کرنے سے روکا، جس پر دونوں سیاسی جماعتوں کے درمیان جھگڑا ہو گیا، بات ہاتھا پائی تک پہنچی تو پولنگ کا عمل روک دیا گیا۔

ڈی ایس پی انویسٹی گیشن نے صورتحال پر قابو پا کر پولنگ کا عمل 15 منٹ بعد دوبارہ شرور کروایا۔ اسی طرح روڈہ پولنگ سٹیشن پر بھی پی ٹی آئی اور مسلم لیگ ن کے کارکنوں کے مابین تلخ کلامی ہوئی تاہم پولنگ کا عمل جاری رہا۔