تازہ ترین
  • بریکنگ :- موجودہ حکومت نے ملک کوتباہی کی طرف دھکیل دیا ہے،عمران خان
  • بریکنگ :- واضح ہوگیاان کی معیشت ٹھیک کرنےکی تیاری نہیں تھی،عمران خان
  • بریکنگ :- واضح ہوگیا یہ مہنگائی کم کرنےنہیں آئےتھے،عمران خان
  • بریکنگ :- بجٹ سےپہلےہی پٹرول،ڈیزل،بجلی کی قیمتیں بڑھادی گئیں،عمران خان
  • بریکنگ :- موجودہ حکومت نےعام آدمی کا معاشی قتل کردیا ،عمران خان
  • بریکنگ :- انہوں نےپٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں مزید بڑھانی ہیں،عمران خان
  • بریکنگ :- ڈیزل کی قیمت کا سب سےزیادہ اثرکسانوں پرپڑے گا،عمران خان
  • بریکنگ :- سپرٹیکس سےکارپوریٹ سیکٹرپر 40 فیصد ٹیکس ہوجائے گا،عمران خان
  • بریکنگ :- سپرٹیکس کی وجہ سے ہرچیزمہنگی ہوجائےگی،عمران خان
  • بریکنگ :- انڈسٹریز نےمزدوروں کو نکالنا شروع کردیا ہے،عمران خان
  • بریکنگ :- سپرٹیکس لگنےسےکئی فیکٹریاں بندہوناشروع ہوگئی ہیں،عمران خان
  • بریکنگ :- ہماری حکومت نےانڈسٹریزپرٹیکسزکا بوجھ نہیں ڈالا تھا،عمران خان
  • بریکنگ :- ہماری حکومت میں انڈسٹریزکومزدورنہیں مل رہےتھے،عمران خان
  • بریکنگ :- ہماری حکومت میں ٹیکسٹائل انڈسٹریز نے ترقی کی،عمران خان
  • بریکنگ :- موجودہ حکومت نےتنخواہ دارطبقے پرٹیکس بڑھادیا ،عمران خان
  • بریکنگ :- تنخواہ دارطبقےکوپہلےایک لاکھ تک چھوٹ دی گئی تھی،عمران خان
  • بریکنگ :- اب سلیب کو 50 ہزار روپے تک لے آئے ہیں،عمران خان
  • بریکنگ :- ایک لاکھ تنخواہ لینےوالے کا ٹیکس دگنا کردیا گیا،عمران خان
  • بریکنگ :- ہماری حکومت نے ریکارڈ ٹیکس اکٹھا کیا تھا،عمران خان
  • بریکنگ :- ہم نےجولوگ ٹیکس دےرہےتھےان پربوجھ نہیں ڈالا،عمران خان
  • بریکنگ :- ٹیکس نہ دینےوالے 4 کروڑ 30لاکھ گھرانوں کوٹیکس نیٹ میں شامل کیا،عمران خان
  • بریکنگ :- اسلام آباد:روپیہ کی قدر تیزی سے گر رہی ہے،عمران خان
  • بریکنگ :- عدم اعتمادکےبعد ڈالر 212 روپےتک پہنچ چکا،عمران خان
  • بریکنگ :- روپیہ،اسٹاک مارکیٹ گرنےسےریکارڈمہنگائی ہوئی،عمران خان
  • بریکنگ :- بجٹ کے بعد سارا بوجھ تنخواہ دارطبقے پرپڑے گا،عمران خان
  • بریکنگ :- ہماری حکومت نےکوروناکےدوران سب سےزیادہ روزگاردیا،عمران خان

اورنج لائن کا پیسہ ریلوے ٹریک پر خرچ ہوتا تو ایسے حالات نہ ہوتے، فواد چودھری

Published On 07 June,2021 06:49 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) وفاقی وزیر فواد چودھری نے سابق حکمرانوں کی پالیسیوں کو سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ ریلوے میں کئی سال کی کوتاہیوں سے حادثات ہو رہے ہیں۔ اورنج لائن کا پیسہ ریلوے ٹریک پر خرچ ہوتا تو ایسے حالات نہ ہوتے۔

قومی اسمبلی کے اجلاس میں اظہار خیال کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ نواز شریف دور میں منگلا سے ایک ٹریک جاتا تھا جو ختم ہو گیا، پتا چلا کہ اتفاق فاؤنڈری نے پورا ٹریک ہی خرید لیا ہے۔ ان لوگوں نے کرپشن اور سینہ زوری کی بنیاد رکھی۔ ایسے حکمران مسلط رہے جنہیں قوم کی پرواہ نہیں تھی۔

فواد چودھری نے کہا کہ جو لوگ مسلط رہے انہوں نے پی ٹی وی اور پاکستان سٹیل مل کو تباہ کیا۔ ملک کو تباہ کرنے والے آج ہمیں درس دے رہے ہیں۔ ریلوے حادثات کا خون (ن) لیگ اور پیپلز پارٹی کے ہاتھوں پر ہے۔ سیاسی بھرتیوں کے ذریعے سرکاری اداروں کو تباہ کیا گیا۔ اس کے مقابلے میں تحریک انصاف نے ایک بھی سیاسی بھرتی نہیں کی۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف کے تین سال اداروں کو پاؤں پر کھڑا کرنے میں صرف ہوئے لیکن اپوزیشن عدالتی اور انتخابی اصلاحات کے بجائے صرف نیب کیسز ختم کرانا چاہتی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اگلے انتخابات تک یہ جماعتیں صرف چند حلقوں تک محدود رہ جائیں گی۔ ہم اپوزیشن کے ساتھ آگے چلنا چاہتے ہیں لیکن یہ جماعتیں مقدمات سے آگے بڑھنے والی نہیں، انہوں نے ایک بار پھر اپوزیشن کو دعوت دی کہ اپنے مقدمات سے آگے نکل کر دیکھیں، آئیے الیکشن اصلاحات اور جوڈیشل ریفارمز پر بات کرتے ہیں۔