تازہ ترین
  • بریکنگ :- شاہدخاقان عباسی کی زیرصدارت سولرانرجی سےمتعلق ٹاسک فورس کااجلاس
  • بریکنگ :- مریم اورنگزیب سمیت ٹاسک فورس کے دیگر ارکان کی اجلاس میں شرکت
  • بریکنگ :- کمیٹی کا سولر انرجی کی پیداوار بڑھانے کے لیے مختلف اقدامات کا جائزہ
  • بریکنگ :- سرکاری عمارتوں کوسولرانرجی پرمنتقل کرنے کا فیصلہ، وزیراطلاعات
  • بریکنگ :- بجلی پرسبسڈی والےعلاقوں میں بھی سولرپلانٹس لگانےکافیصلہ،مریم اورنگزیب
  • بریکنگ :- توانائی کی بچت اورگرین انرجی کوفروغ دینےکیلئےپالیسی بنانےپر بھی غور
  • بریکنگ :- سرکاری عمارتوں کوشمسی توانائی پرمنتقل کرنےکیلئے رپورٹ مرتب کرنےکی ہدایت
  • بریکنگ :- شمسی توانائی پرمنتقلی کیلئےسولرپینلزکوفروغ دینےکی ضرورت ہے،وزیراطلاعات
  • بریکنگ :- سولرپینلزسےاضافی بجلی گرڈاسٹیشنزکوبھی فروخت کی جاسکےگی،وزیراطلاعات
  • بریکنگ :- 4 سے 5 ہزارمیگاواٹ کےمنصوبوں پرکام جلدشروع ہوگا،وزیراطلاعات

ٹوکیو اولمپکس: جاپانی شہریوں کی بڑی تعداد غیر ملکی تماشائیوں کو اجازت دینے کی مخالف

Published On 08 March,2021 06:36 pm

ٹوکیو: (ویب ڈیسک) جاپان میں 75 فیصد شہری ٹوکیو اولمپکس میں غیر ملکی شائقین کی شرکت کے مخالف ہیں، تاہم اس حوالے سے منتظمین نے ابھی حتمی فیصلہ کرنا ہے۔

فرانسیسی خبر رساں ادارے اے ایف پی نے روزنامہ یومیوری شمبن کے حوالے سے بتایا ہے کہ پول میں صرف 18 فیصد افراد نے غیر ملکی شائقین کو یہ مقابلے دیکھنے کی اجازت دینے کی حمایت کی ہے۔

منتظمین کا کہنا ہے کہ وہ غیر ملکی شائقین کو اولمپکس مقابلے دیکھنے کی اجازت دینے یا نہ دینے کے بارے میں فیصلہ رواں ماہ کریں گے۔

دوسری جانب جاپانی میڈیا کا دعویٰ ہے کہ حکام نے پہلے ہی فیصلہ کر لیا ہے کہ اولمپکس کے لیے غیر ملکی تماشائیوں کو جاپان آنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

رواں برس جنوری میں کیے گئے ایک پول کے مطابق جاپان میں اولمپکس کی عوامی حمایت میں کمی آئی جبکہ ایک اور پول کے مطابق 80 فیصد سے زائد افراد کا کہنا تھا کہ ’گیمز کو منسوخ یا دوبارہ سے ملتوی کر دینا چاہیے۔‘

جاپان کے وزیر برائے ایڈمنسٹریٹو اور ریگولیٹری ریفارمز تارو کونو کا کہنا تھا کہ ’ کورونا وائرس کی وجہ سے ملتوی ہونے والے ٹوکیو اولمپکس کے ساتھ ’کچھ بھی ہوسکتا‘ ہے۔‘

تاہم انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی (آئی او سی) کے سربراہ تھامس بیخ نے ایک انٹرویو میں کہا کہ  کورونا وائرس کی وجہ سے تاخیر کا شکار ہونے والے ٹوکیو اولمپکس رواں سال موسم گرما میں منعقد ہوں گے، اور اس حوالے سے  کوئی پلان بی نہیں  ہے۔

ایک انٹرویو میں آئی او سی کے سربراہ کا کہنا تھا کہ ہمارے پاس اس وقت کوئی وجہ نہیں ہے کہ اس بات پر یقین کریں کہ 23 جولائی کو ٹوکیو میں اولمپکس کا آغاز نہیں ہو سکے گا۔

یاد رہے کہ دنیا بھر میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ کی وجہ سے مارچ 2020 میں ٹوکیو میں ہونے والے اولمپکس کو موخر کر دیا گیا تھا۔ یہ گیمز 24 جولائی سے 9 اگست 2020 تک منعقد ہونا تھیں تاہم اب یہ نئے شیڈول کے مطابق 23 جولائی سے 8 اگست 2021 تک منعقد ہونی ہیں۔