تازہ ترین
  • بریکنگ :- کراچی:وفاقی وزیرقانون کانیشنل جوڈیشل کانفرنس کی تقریب سے خطاب
  • بریکنگ :- رول آف لا کا بنیادی مقصد انصاف سب کے لیے برابرہے،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- کراچی:جسٹس ہیلپ لائن کا آئیڈیا بہترین ہے، وزیر قانون فروغ نسیم
  • بریکنگ :- ہمیں بطورقوم اپنا احتساب کرنا ہوگا،وفاقی وزیرقانون فروغ نسیم
  • بریکنگ :- جسٹس ہیلپ لائن سےوکلا کی مشکلات حل ہوں گی، وزیرقانون فروغ نسیم

دریا میں خون جما دینے والی سردی میں بھی روزانہ غوطہ لگانے والا شہری

Published On 29 July,2021 08:30 am

مشی گن:(روزنامہ دنیا) ایک امریکی شخص کو ‘ دریا میں چھلانگ لگانے والے شخص’ کا باقاعدہ خطاب مل گیا ہےکیونکہ وہ خون جما دینے والی سردی میں بھی بلاناغہ دریائے مشی گن میں غوطہ لگاتے ہیں۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق ڈین او کونر کہتے ہیں کہ وہ شراب نوشی کے بعد دردِ سر اور دیگر کیفیات سے پریشان تھے اور علاج کے طور پر روزانہ دریا میں نہاتے ہیں اور یہاں سے جسمانی طور پر بہتر ہوکر باہرآتے ہیں۔ اب یہ حال ہے کہ وہ خون جمادینے والی سردی میں بھی یہاں آتے ہیں۔

شروع میں 53 سالہ ڈین اوکونر کو کچھ عجیب لگا لیکن دریا میں نہانے کے بعد انہیں بہت اچھا محسوس ہوا۔ ان کا دل و دماغ بہت صاف اور ہلکا ہوگیا جس کے بعد ڈین نے دریا میں غوطہ لگانے کو اپنی عادت بنالیا۔ ڈین کی بیوی مارگریٹ نے بتایا کہ وہ موسیقار ہیں اور وبا کے بعد لاک ڈاؤن ہونے کے بعد افسردہ تھے ۔ اس کے بعد ڈین نے دریا میں سکون اور اطمینان تلاش کیا ہے۔ زیر نظر سوشل میڈیا پر پوسٹ کی گئی ویڈیو میں ڈین اوکونر فروری کی برفیلی دوپہر دریا میں نہاتے نظر آ رہے ہیں۔