تازہ ترین
  • بریکنگ :- لاہور:سیکرٹری بلدیات اسد رحمان گیلانی کا تبادلہ معمہ بن گیا
  • بریکنگ :- 50ہزارپنشنرزاور 60ہزارملازمین کوتنخواہوں کی مدمیں 5ارب روپےجاری نہ ہوسکے
  • بریکنگ :- 10روزقبل 2019کاقانون فعال ہونےکےباوجودافسران کونئےعہدوں کےاحکامات جاری نہ ہوئے
  • بریکنگ :- فنانس افسران کےپاس دستخط کےاختیارات نہ ہونےسےفنڈزکی ادائیگیاں رک گئیں
  • بریکنگ :- لاہورکے 6ہزارریٹائرڈملازمین کی پنشن 10روزسےالتواکاشکار
  • بریکنگ :- لاہور:4ہزار 900ملازمین کوتنخواہیں نہ دی گئیں
  • بریکنگ :- لاہور:پنجاب بلدیاتی ایکٹ 2021 ختم کردیاگیا

بنگلا دیش میں بدترین سیلاب، کھڑی فصلیں تباہ، قحط کا خطرہ لاحق

Published On 22 June,2022 07:23 pm

ڈھاکا:(دنیا نیوز) بنگلا دیش میں بد ترین سیلاب کے بعد امدادی کارروائیاں جاری ہیں جبکہ کھڑی فصلیں تباہ ہونے سے قحط کا خطرہ لاحق ہوگیا ہے۔

بنگلا دیشی فوج امدادی کارروائیوں میں مصروف ہے، متاثرہ علاقوں میں طیاروں سے امدادی اشیاء پھینک دی گئی ہیں۔

غیر ملکی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق سہلٹ اور دیگر شہروں میں اب بھی 45 لاکھ افراد تک زمینی رسائی ممکن نہیں ہے، کھانے پینے کی اشیاء طیاروں سے متاثرہ علاقوں میں گرائی جارہی ہیں، کھڑی فصلیں تباہ ہونے سے قحط کا خطرہ بھی سر پر منڈلانے لگا، کئی علاقوں تک رسائی اب بھی ممکن نہیں ہوئی۔

دوسری جانب بھارت کی شمال مشرقی ریاستوں میں بھی صورتحال ناگفتہ بہ ہے، بارش کا سلسلہ رکنے کا نام نہیں لے رہا، دریاؤں میں طغیانی بڑھتی جارہی ہے، لینڈ سلائڈنگ کی وجہ سے متعدد پہاڑی علاقوں سے رابطہ منقطع ہوگیا ہے۔