تازہ ترین
  • بریکنگ :- پڑوسی ممالک کےساتھ مل کرافغان حکومت کوتسلیم کیاجائےگا،فوادچودھری
  • بریکنگ :- افغانستان میں امن کیلئےہماری کوششیں جاری ہیں،فوادچودھری
  • بریکنگ :- طالبان سےبات کررہےہیں دیگر گروپس کوبھی حکومت میں شامل کریں،فوادچودھری
  • بریکنگ :- پاکستان افغانستان میں استحکام چاہتاہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- افغان حکومت کوتسلیم کرنےسےمتعلق خطےکےممالک کوساتھ لےکرچل رہےہیں،فوادچودھری
  • بریکنگ :- ڈالرکی افغانستان اسمگلنگ کےباعث روپےکی قدرمیں کمی آئی،فوادچودھری
  • بریکنگ :- رواں سال گندم اورگنےکی ریکارڈ پیداوار ہوئی ہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- کوروناکےباعث دنیابھرمیں اشیائےضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ ہوا،فوادچودھری
  • بریکنگ :- زراعت کےشعبےمیں ملکی معیشت میں 1100ارب کااضافہ کیاگیا،فوادچودھری
  • بریکنگ :- ٹیکسٹائل کی صنعت کوبھی فروغ حاصل ہورہاہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- تعمیرات کےشعبےمیں بھی ریکارڈ سرمایہ کاری آرہی ہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- افغانستان کی صور تحال کااثربراہ راست پاکستان پرہوتاہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- مودی اوران کی جماعت کی وجہ سےحالات میں بہتری نہیں آرہی،فوادچودھری
  • بریکنگ :- پاک بھارت میچ کیلئےبہت پرجوش ہیں،فوادچودھری
  • بریکنگ :- دلی میں آج جلسہ کریں تومودی سے بڑاجلسہ ہوگا ،فوادچودھری

بھارت میں کورونا کی تباہ کاریاں جاری، مزید 3 ہزار 688 افراد دم توڑ گئے

Published On 02 May,2021 10:07 am

نئی دہلی: (دنیا نیوز) بھارت میں کورونا سے تباہی جاری، مزید 3 ہزار 688 افراد دم توڑ گئے، ہلاکتوں کی تعداد دو لاکھ پندرہ ہزار سے تجاوزکر گئی۔

بھارت میں کورونا کے حملے مزید تیز ہو گئے، ایک روز میں 3 لاکھ 92 ہزار سے زائد نئے مریض سامنے آئے، جان لیوا وائرس سے مزید 3 ہزار 688 افراد لقمہ اجل بن گئے۔ مرنے والوں کی مجموعی تعدا د 2 لاکھ 15 ہزار سے تجاوز کر گئی۔ بھارت میں کورونا کے نئے متاثرین کی شرح 18.24 فیصد تک پہنچ گئی ہے۔

ہسپتالوں میں مریضوں کے لیے جگہ ختم ہو گئی، لوگ اپنی مدد آپ کے تحت اپنے پیاروں کے لیے آکسیجن اور ادویات کا انتظام کررہے ہیں۔ دلی میں مسلمانوں نے کورونا ہسپتال بنا لیا جہاں کورونا وائرس کے مریضوں کو سہولیات دی جا رہی ہیں۔

مختلف علاقوں سے سو ٹن سے زائد آکسیجن کے ٹینکر ریل کے ذریعے دلی پہنچائے گئے۔ روس کی جانب سے ڈیڑھ لاکھ ویکسین بھارت پہنچ گئی، جرمنی سے 120 وینٹی لیٹرز کی امداد بھارت کی لیے روانہ کر دی گئی۔ خطرناک صورت حال کے پیش نظر مزید ملکوں نے بھارت پر سفری پابندیاں عائد کر دیں۔