تازہ ترین
  • بریکنگ :- جنوبی پنجاب صوبہ کاقیام تحریک انصاف کےمنشورکاحصہ ہے،وزیر خارجہ
  • بریکنگ :- ملتان:صوبہ بنانےکیلئےہمارے پاس دوتہائی اکثریت نہیں،وزیر خارجہ
  • بریکنگ :- پیپلزپارٹی، ن لیگ دونوں جماعتوں کی قیادت کو خط لکھے،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- ابھی تک دونوں جماعتوں کی جانب سےجواب سامنےنہیں آیا،وزیر خارجہ
  • بریکنگ :- پیپلزپارٹی،ن لیگ جنوبی پنجاب صوبہ کیلئےبہت کچھ کرسکتےتھے،وزیر خارجہ
  • بریکنگ :- پیپلزپارٹی،ن لیگ صوبہ تودور،سیکرٹریٹ بھی نہ بناسکے،شاہ محمود قریشی
  • بریکنگ :- ہم نےسیکرٹریٹ بناکرجنوبی پنجاب صوبےکی بنیادرکھ دی،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- ملتان:اپوزیشن سےملکی ترقی ہضم نہیں ہورہی،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- تحریک انصاف کی حکومت آئینی مدت پوری کرےگی،وزیر خارجہ
  • بریکنگ :- ملتان: عام انتخابات اپنے وقت پر ہی ہوں گے،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- حکومتی پالیسیوں کوعالمی سطح پرسراہا جا رہا ہے،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- مہنگائی ہماری حکومت کیلئے بہت بڑا چیلنج ہے،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- مہنگائی کیخلاف جنگ لڑرہےہیں،جلد قابوپالیں گے،وزیر خارجہ
  • بریکنگ :- عمران خان کرپشن کےخاتمےپریقین رکھتے ہیں، شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- پنجاب میں نئےبلدیاتی نظام سےعوام کوریلیف ملےگا،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- سندھ میں بلدیاتی نظام پراپوزیشن جماعتوں کواعتراض ہے،وزیرخارجہ

لاہور کی فضاؤں پر آلودگی کا راج برقرار

Published On 15 November,2021 08:51 am

لاہور: (دنیا نیوز) لاہور کی فضاؤں پر آلودگی کا راج برقرار ہے۔ شہر کا اوسط ائیر کوالٹی انڈیکس 313 کی خطرناک سطح پر پہنچ گیا۔ آنے والے دنوں میں آلودگی میں مزید اضافے کے خدشات بھی موجود ہیں۔

آلودگی کے عفریت نے تو گویا لاہور میں مستقل ڈیرے ڈال لئے ہیں۔ شہر کی فضائیں کئی ہفتوں سے خطرناک سطح تک پہنچ جانے والی آلودگی کی زد میں ہیں۔ لاہور میں آج اوسط ائیرکوالٹی انڈیکس ایک بار پھر 300 کی حد پار کرگیا ہے، جو 313 کی سطح تک جا پہنچا ہے۔ ماہرین کے مطابق بارش ہونے تک صورت حال میں بہتری کے زیادہ امکانات نہیں ہیں۔

لاہور میں 524 اے کیو آئی کے ساتھ تاریخی انارکلی بازار آلودگی میں سرفہرست ہے جبکہ پنجاب یونیورسٹی اور ملحقہ علاقوں میں آلودگی کا تناسب 494 اے کیو آئی ریکارڈ کیا گیا ہے۔ ٹاؤن شپ میں 474 اور ڈی ایچ اے فیز آٹھ میں اے کیو آئی 473 رہا۔ ظفرعلی روڈ پر آلودگی کا تناسب 446 اے کیو آئی تک جا پہنچا جسے کافی خطرناک صورت حال قرار دیا جا رہا ہے۔

دوسری طرف محکمہ موسمیات نے آئندہ 24 گھنٹوں کے دوران موسم خشک رہنے کی پیش گوئی کی ہے۔