تازہ ترین
  • بریکنگ :- لاہور:4 سال سےسیف سٹی کیمرےبندپڑےہیں،حمزہ شہباز
  • بریکنگ :- نیاپاکستان بنانےوالوں نےپرانابھی بربادکردیا،وزیراعلیٰ پنجاب
  • بریکنگ :- قانون پرعملداری ممکن بنائیں گے،وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز
  • بریکنگ :- قانون موجودہےلیکن سزامیں تاخیرہوتی ہے،وزیراعلیٰ پنجاب
  • بریکنگ :- سفارش پربھرتیاں ہوتی رہیں گی توپولیس کیسےکام کرےگی؟حمزہ شہباز
  • بریکنگ :- صدرمملکت عمران نیازی کےکہنےپرآئین شکنی کےمرتکب ہوتےہیں،حمزہ شہباز
  • بریکنگ :- پنجاب میں مفت ادویات بندکردی گئی تھیں،اب میسرآئیں گی،حمزہ شہباز
  • بریکنگ :- عوام کوآسانیاں فراہم کرنےکیلئےکوشاں ہیں،وزیراعلیٰ پنجاب

چکی آٹا کی قیمت میں ایک بار پھر اضافہ، قیمت 80 روپے فی کلو تک پہنچ گئی

Published On 12 October,2020 08:16 pm

لاہور: (دنیا نیوز) ایک ہی ماہ میں چکی آٹا کی قیمت میں تیسری بار اضافہ، قیمت 2 روپے اضافے کے ساتھ 80 روپے فی کلو تک پہنچ گئی۔ نانبائی ایسوسی ایشن نے بھی روٹی کی قیمت بڑھنے کا عندیہ دے دیا۔

تفصیل کے مطابق مہنگائی نے روٹی کھانا بھی مشکل بنا دیا۔ اوپن مارکیٹ میں سستا آٹا غائب ہوا تو آٹا چکی مالکان نے قیمت میں ایک بار پھر 2 روپے فی کلو کا اضافہ کردیا۔ 78 روپے سے بڑھ کر قیمت 80 روپے فی کلو ہو گئی۔

چکی آٹا خریدنے والے صارفین نے اس صورتحال میں شدید پریشان ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ روٹی کھانا بھی مشکل بنا دیا گیا ہے۔ دوسری جانب لاہور آٹا چکی اونرز ایسوسی ایشن کے جنرل سیکرٹری عبدالرحمن کا کہنا ہے کہ گندم کے نرخ 2500 روپے فی من سے تجاوز کر چکے ہیں۔ مہنگی گندم خرید کر سستا آٹا فروخت نہیں کر سکتے۔

صدر نان بائی ایسوسی ایشن آفتاب اسلم گل کا کہنا تھا کہ آٹے کی قلت اب برداشت سے باہر ہو رہی ہے۔ آٹا سپلائی کے حوالے سے حکومت کو منگل تک کی ڈیڈ لائن دے رہے ہیں۔ اگر آٹا دستیاب ہوگا تو روٹی کی قیمت نہیں بڑھائیں گے۔

خیال رہے کہ آٹا چکی مالکان نے رواں ماہ پہلے آٹا 76 روپے کلو کیا، پھر اس سے بڑھا کر 78 روپے کیا اور اب 80 روپے فی کلو کر دیا ہے۔