تازہ ترین
  • بریکنگ :- ٹنڈوالہ یار اورگردونواح میں تیزہواؤں کےساتھ موسلادھاربارش
  • بریکنگ :- ٹنڈوالہ یار:بارش کےباعث نشیبی علاقےزیرآب،ضلع بھرمیں بجلی بند
  • بریکنگ :- حیدرآباد اور گردونواح میں بارش
  • بریکنگ :- حیدرآباد:تھرپارکراوربدین میں آسمانی بجلی گرنےسے 3 افرادجاں بحق
  • بریکنگ :- آسمانی بجلی گرنےسےبدین کےعلاقےٹنڈوغلام علی میں 2خواتین جاں بحق
  • بریکنگ :- آسمانی بجلی گرنےسےتھرپارکرکےعلاقےاسلام کوٹ میں ایک شخص جاں بحق

بھارت میں کورونا بے قابو: مسلسل تیسرے روز بھی 3 لاکھ سے زائد مریض سامنے آگئے

Published On 24 April,2021 09:51 am

نئی دلی: (دنیا نیوز) بھارت میں کورونا وائرس نے تباہی مچا دی۔ مسلسل تیسرے روز بھی تین لاکھ سے زائد مریض سامنے آگئے۔ ہسپتالوں میں آکسیجن ختم ہونے سے ہلاکتیں بڑھنے لگیں، مزید 2 ہزار 621 لوگ ہلاک ہوگئے۔

بھارت میں کورونا وبا بے قابو، تین روز میں کورونا کیسز کی تعداد 10 لاکھ کے قریب پہنچ گئی۔ بھارتی میڈیا کے مطابق دلی کورونا کا گڑھ بن گیا، روزانہ سب سے زیادہ کیسز سامنے آنے لگے۔ ہسپتالوں میں جگہ نہ ہونے کے باعث مریض گھروں میں ہی سسک سسک کر دم توڑنے لگے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق مودی سرکار ہلاکتوں کی تعداد چھپانے لگی، بھارت میں کورونا سے ہلاکتوں کی تعداد اس سے کئی زیادہ ہوسکتی ہے۔ کورونا سے شدید متاثر علاقوں میں مریضوں کو آکسیجن فراہم کرنے کیلئے دوسری ٹرین لکھنو پہنچ گئی۔

مہارشٹرا میں کورونا کیسز کے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے ویک اینڈ کرفیو بھی نافذ ہے، دیگر کئی متعدد ریاستوں میں صورت حال انتہائی نازک ہو چکی ہے۔ مودی سرکار کا صحت کا نظام بری طرح ناکام نظر آرہا ہے۔ ہسپتالوں کے باہر مریضوں کی لائنیں لگی ہوئی ہیں۔ مہلک وائرس سے مرنے والوں کی آخری رسومات کی ادائیگی کے لیے بھی جگہ کم پڑنے لگی۔