تازہ ترین
  • بریکنگ :- سپرٹیکس سےکارپوریٹ سیکٹرپر 40 فیصد ٹیکس ہوجائے گا،عمران خان
  • بریکنگ :- سپرٹیکس کی وجہ سے ہرچیزمہنگی ہوجائےگی،عمران خان
  • بریکنگ :- انڈسٹریز نےمزدوروں کو نکالنا شروع کردیا ہے،عمران خان
  • بریکنگ :- سپرٹیکس لگنےسےکئی فیکٹریاں بندہوناشروع ہوگئی ہیں،عمران خان
  • بریکنگ :- ہماری حکومت نےانڈسٹریزپرٹیکسزکا بوجھ نہیں ڈالا تھا،عمران خان
  • بریکنگ :- ہماری حکومت میں انڈسٹریزکومزدورنہیں مل رہےتھے،عمران خان
  • بریکنگ :- ہماری حکومت میں ٹیکسٹائل انڈسٹریز نے ترقی کی،عمران خان
  • بریکنگ :- موجودہ حکومت نےتنخواہ دارطبقے پرٹیکس بڑھادیا ،عمران خان
  • بریکنگ :- تنخواہ دارطبقےکوپہلےایک لاکھ تک چھوٹ دی گئی تھی،عمران خان
  • بریکنگ :- اب سلیب کو 50 ہزار روپے تک لے آئے ہیں،عمران خان
  • بریکنگ :- ایک لاکھ تنخواہ لینےوالے کا ٹیکس دگنا کردیا گیا،عمران خان
  • بریکنگ :- ہماری حکومت نے ریکارڈ ٹیکس اکٹھا کیا تھا،عمران خان
  • بریکنگ :- ہم نےجولوگ ٹیکس دےرہےتھےان پربوجھ نہیں ڈالا،عمران خان
  • بریکنگ :- ٹیکس نہ دینےوالے 4 کروڑ 30لاکھ گھرانوں کوٹیکس نیٹ میں شامل کیا،عمران خان

ملک میں مہنگائی مزید بڑھ گئی، شرح 17.05 فیصد تک پہنچ گئی

Published On 07 May,2021 07:03 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) حکومتی دعوؤں کے باوجود مہنگائی میں اضافے کا سلسلہ جاری ہے، ایک ہفتے میں مہنگائی کی شرح میں اوسط 0.50 فیصد اضافہ ہوا جبکہ مہنگائی کی شرح 17.05 فیصد ہوگئی۔

ادارہ شماریات کی ہفتہ وار رپورٹ کے مطابق ملک بھر میں آٹا، ٹماٹر، چینی، دال مونگ، تازہ دودھ، گائے کا گوشت، بکرے کا گوشت، ویجی ٹیبل گھی،خشک دودھ، گڑ، سرسوں کا تیل اور دیگر 18 اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ ہوا۔ انڈے، آلو، پیاز، لہسن، ایل پی جی اور دال چنا سمیت 7 اشیا سستی ہوئیں جب کہ 26 اشیائے ضروریہ کی قیمتیں مستحکم رہیں۔

اعدادوشمار میں بتایا گیا ہے کہ گذشتہ ہفتے کے دوران سالانہ بنیادوں پر 17 ہزار 732 روپے ماہانہ تک آمدنی رکھنے والے طبقے کیلئے مہنگائی کی شرح میں 19.81 فیصد، 17 ہزار 733 روپے سے 22 ہزار 888 روپے ماہانہ تک آمدنی رکھنے والے طبقے کیلئے 17.15 فیصد، 22 ہزار 889 روپے سے 29 ہزار 517 روپے ماہانہ تک آمدنی والوں کے لیے 16.23 فیصد، 29 ہزار 518 روپے سے 44 ہزار 175 روپے ماہانہ تک آمدنی رکھنے والے طبقے کیلئے مہنگائی کی شرح میں 16.40 فیصد رہی۔