تازہ ترین
  • بریکنگ :- 25 مئی کو 3 بجےسری نگرہائی وے پرملوں گا،عمران خان
  • بریکنگ :- ہرمکتبہ فکرکےلوگ لانگ مارچ میں شرکت کریں،عمران خان
  • بریکنگ :- اسمبلیوں کی تحلیل اورشفاف الیکشن کی تاریخ چاہیے،عمران خان
  • بریکنگ :- اسمبلی تحلیل اورالیکشن کی تاریخ ملنےتک اسلام آباد رہیں گے،عمران خان
  • بریکنگ :- بیوروکریسی نےغیرقانونی کارروائی کی توایکشن لیں گے ،عمران خان
  • بریکنگ :- فوج کوکہتاہوں آپ نیوٹرل ہیں،نیوٹرل ہی رہیں،عمران خان
  • بریکنگ :- ہم نےجیل سےنہیں ڈرنا،جان کی قربانی دینی ہے،عمران خان
  • بریکنگ :- باربارکہا جاتاہے جان کو خطرہ ہے،کوئی خطرہ نہیں،عمران خان
  • بریکنگ :- ہم جان کی قربانی دینے کیلئے تیارہیں،عمران خان
  • بریکنگ :- غلام بننے سے بہتر موت قبول ہے،عمران خان
  • بریکنگ :- ہم چوروں کو کبھی تسلیم نہیں کریں گے،عمران خان
  • بریکنگ :- خوف ہےیہ لوگ پٹرول ،ڈیزل ،انٹرنیٹ بندکردیں گے،عمران خان
  • بریکنگ :- انٹرنیٹ،پٹرول ،ٹرانسپورٹ بندہو گی،پہلےسےتیاری رکھیں،عمران خان
  • بریکنگ :- تحریک انصاف کا 25 مئی کو لانگ مارچ کا اعلان

وزیراعظم عمران خان بین الافغان مذاکرات کے جلد آغاز کیلئے پرامید

Published On 10 September,2020 11:21 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) وزیراعظم عمران خان نے امید ظاہر کی ہے کہ بین الافغان مذاکرات جلد شروع ہونگے جو خطے اور دنیا بھر میں امن، استحکام اور خوشحالی یقینی بنانے کیلئے افغان تنازع کے پرامن سیاسی حل پر منتج ہونگے۔

وہ سرمایہ کاری اور خارجہ اقتصادی تعلقات کے بارے میں ازبکستان کے نائب وزیراعظم سے گفتگو کررہے تھے جنہوں نے ان سے جمعرات کے روز اسلام آباد میں ملاقات کی۔ عمران خان نے کہا کہ ایک پرامن اور مستحکم افغانستان پاکستان اور خطے کیلئے انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔

انہوں نے افغان امن عمل میں پاکستان کے مثبت کردار کو اجاگر کرتے ہوئے کہا کہ افغانستان میں تنازع کا کوئی فوجی حل نہیں ہے۔ پرامن اور مستحکم افغانستان پاکستان اور خطے کے لئے بہت اہمیت کا حامل ہے۔

دونوں رہنماؤں نے دوران ملاقات کوویڈ 19، دو طرفہ تعاون، علاقائی رابطہ، اور علاقائی امن وسلامتی پر تبادلہ خیال کیا۔ وزیراعظم نے اس موقع پر کہا کہ پاکستان اور ازبکستان کے مابین خوشگوار اور بھائی چارے کے تعلقات ہیں۔

وزیر اعظم نے اس موقع پر ریلوے منصوبوں کے ذریعے علاقائی رابطے اور تجارت میں اضافے کے امکانات پر بھی گفتگو کی۔ نائب وزیراعظم نے ازبک صدر کے تہذیبی مبارکباد اور نیک خواہشات کا اظہار کیا اور کہا صدر میرزیوئیف دورہ پاکستان کے منتظر ہیں۔

نائب وزیراعظم ازبکستان نے کہا کہ صدر میرزیوئیف نے وزیراعظم کو ازبکستان کے دورے کی دعوت دی ہے۔ وزیراعظم نے دو طرفہ اور خطے میں باہمی فائدہ مند تعاون کو مضبوط بنانے کے لئے ازبکستان کے ساتھ مل کر کام کرنے کی پاکستان کی خواہش کا اظہار کیا۔