تازہ ترین
  • بریکنگ :- بھارت کامقبوضہ کشمیرمیں جی 20 اجلاس بلانےکامعاملہ
  • بریکنگ :- پاکستان نےبھارت کی ایک اورمکروہ سازش کومستردکردیا
  • بریکنگ :- بھارتی میڈیاکےمطابق مقبوضہ کشمیرمیں جی 20اجلاس منعقدکرنےپرغورہورہاہے، ترجمان
  • بریکنگ :- مقبوضہ کشمیربین الاقوامی سطح پرتسلیم شدہ تنازع ہے،ترجمان دفترخارجہ
  • بریکنگ :- بھارت مقبوضہ کشمیرمیں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کاذمہ دارہے،ترجمان
  • بریکنگ :- بھارت مقبوضہ کشمیرمیں آبادی کاتناسب بدلنےکےدرپےہے،ترجمان
  • بریکنگ :- امیدہےجی 20رکن ممالک متنازعہ بھارتی کوشش کومستردکریں گے،ترجمان

بھارتی آرمی چیف پر پاکستان کا خوف سوار، ذہنی دباؤ کے شکارہونے کا اعتراف کرلیا

Published On 23 January,2021 09:29 pm

نئی دہلی: (دنیا نیوز) بھارتی فوج ہی نہیں بلکہ انکے سربراہ بھی پاکستان کے خوف سے ذہنی دباؤ کا شکار ہے،، جنرل منوج مکنڈنے میڈیا کے سامنے اعتراف کرلیا ہے کہ وہ خود ذہنی دباؤ کا شکار ہیں۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان کا خوف سر پر سوار، بھارتی فوج کے سربراہ ذہنی دباؤ کا شکار ہو گئے، میڈیا سے گفتگو میں کے دوران اعتراف کرلیا کہ وہ سٹریس کا شکار ہیں۔

زبان سے بات نکلی تو جنرل منوج مکنڈ نے خفت چھپانے کی کوشش کی، پھر کہتے ہیں اسٹریس برا نہیں ہوتا۔

جب بھارتی فوج کے سربراہ کایہ حال ہے تو باقی فوج دماغی طور پر کیسے مضبوط ہوسکتی ہے، اسی لیے تو بھارت کی تینوں افواج کے مشترکہ تھنک ٹینک، یونائیٹڈ سروس انسٹی ٹیوشن آف انڈیا کی حالیہ رپورٹ میں انکشاف کیا گیا کہ بھارت کے تیرہ لاکھ فوجیوں میں سے آدھے سخت ترین ذہنی تناؤ کا شکار ہیں۔

رپورٹ میں انکشاف کیا گیا کہ بھارتی فوجیوں کی ہلاکت کی سب سے بڑی وجہ یا تو خود کشی ہے، یا پھر ساتھی فوجیوں کی اپنے ہی دوستوں پر فائرنگ ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق بھارتی کی نام نہاد ظالم فوج کا عالم یہ ہے کہ 2008ء سے لیکر 2020ء کے دوران 1900 سے زائد فوجی اپنی زندگی کا خاتمہ کر چکے ہیں۔