تازہ ترین
  • بریکنگ :- حقیقت یہ ہےحمزہ شہبازکابطوروزیراعلیٰ انتخاب چیلنج ہی نہیں ہوا،وکیل
  • بریکنگ :- علی ظفرصاحب آپ بھی اس پراپنی رائےدیں،عدالت
  • بریکنگ :- یہ نہیں ہوسکتاکہ قانون ہر 6 ماہ بعدتبدیل ہوجائے،علی ظفر
  • بریکنگ :- 63 اےکی تشریح آئی کہ پارٹی کیخلاف ووٹ دینےوالےکاووٹ شمارنہیں ہوگا،علی ظفر
  • بریکنگ :- ہم نےاس کوآرٹیکل 187 کی روشنی میں دیکھناہے،عدالت
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن نےکہامنحرف ارکان نےپارٹی خلاف ورزی نہیں کی،شہزادشوکت
  • بریکنگ :- ان کومورل ویلیوپرڈی سیٹ کیاجارہاہے،ایڈووکیٹ جنرل پنجاب
  • بریکنگ :- پھریہ معاملہ عدالت کیوں گیا؟لاہورہائیکورٹ
  • بریکنگ :- لاہور:عدالت نےسماعت آدھےگھنٹےکیلئےملتوی کردی

5.6 روپے فی یونٹ بجلی مہنگی، آئی ایم ایف کے کہنے پر حکومت 884ارب وصول کریگی: شیری رحمان

Published On 20 March,2021 04:44 pm

لاہور: (دنیا نیوز) پاکستان پیپلز پارٹی کی سینئر رہنما اور سینیٹر شیری رحمان نے کہا ہے کہ حکومت عالمی مالیاتی ادارے (آئی ایم ایف) کے کہنے پر 884ارب روپے وصول کریگی اور بجلی کی قیمتوں میں 36 فیصد اضافہ ہو گا۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر جاری کردہ اپنے ایک بیان میں پاکستان پیپلز پارٹی کی سینئر رہنما شیری رحمان نے کہا ہے کہ عالمی مالیاتی ادارے (آئی ایم ایف) پاکستانی حکومت چلا رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ عالمی مالیاتی ادارے (آئی ایم ایف) کی ہدایت پر 3 آرڈیننس آج جاری کیے جارہے ہیں۔ آئی ایم ایف کے کہنے پر منی بجٹ لانے کی تیاری ہو رہی ہے۔

سینئر پی پی رہنما کا کہنا تھا کہ نیا آرڈیننس نیپرا کو کابینہ کو بھی نظرانداز کرنے کا حق دے گا۔ آئی ایم ایف کے حکم پر 884ارب روپے وصول کیے جائیں گے۔ بجلی کی قیمتوں میں 5.6 روپے فی یونٹ کا اضافہ کیا جا رہا ہے، بجلی کے بلوں میں ٹیکسوں کے علاوہ 36فیصد اضافہ ہوگا۔