تازہ ترین
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں 24 گھنٹےکےدوران کوروناسےمزید 27 اموات
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں کوروناسےجاں بحق افرادکی تعداد 29 ہزار 219 ہوگئی
  • بریکنگ :- 24گھنٹےکےدوران 70 ہزار 389 کوروناٹیسٹ کیےگئے،این سی اوسی
  • بریکنگ :- 24گھنٹےمیں کوروناکےمزید7 ہزار 963 کیس رپورٹ،این سی اوسی
  • بریکنگ :- ملک میں کورونامثبت کیسزکی شرح 11.31 فیصدرہی،این سی اوسی

چیئر مین نیب کی تقرری کا آرڈیننس پیپلز پارٹی نے مسترد کر دیا

Published On 05 October,2021 05:21 pm

کراچی: (دنیا نیوز) وفاقی حکومت نے چیئر مین نیب کی تقرری سے متعلق آرڈیننس لانے کا فیصلہ کیا ہے جسے پیپلز پارٹی نے حکومتی فیصلے کو مسترد کر دیا ہے۔

پاکستان پیپلز پارٹی کے سینیٹر سلیم مانڈوی والا کا کہنا ہے کہ پیپلزپارٹی حکومت کی طرف سے چیئر نیب سے متعلق آرڈیننس لانے کے حکومتی فیصلہ مسترد کردیا، آرڈیننس کے اوپر آرڈیننس لاکر حکومت نے پارلیمان کو غیر فعال بنا دیا ہے، کیا چیئرمین نیب کا تقرر اتنا بڑا مسئلہ ہے کہ اب آرڈیننس لایا جائیگا؟

ان کا کہنا تھا کہ صدر مملکت خود معاملے کو دیکھیں اور آرڈیننس کے اوپر آرڈیننس کے اجراء کے سلسلے کو روکیں، مذاکرات کے لئے اپوزیشن لیڈر کی تبدیلی کی شرط سمجھ سے بالاتر ہے، پیپلزپارٹی پارلیمان میں آرڈیننس کی بھرپور مخالفت کرے گی۔

پی پی سینیٹر کا کہنا تھا کہ چیئرمین نیب کے تقرر سے متعلق قانون بڑا واضح ہے، حکومت شرائط رکھنی کی بجائے پارلیمانی روایت کے تحت مذاکرات کرے۔