نگران وزیراعظم انوار الحق کاکڑ نے اپنے عہدے کا حلف اٹھا لیا

Published On 14 August,2023 03:10 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) نگران وزیراعظم انوار الحق کاکڑ نے اپنے عہدے کا حلف اٹھا لیا۔

ایوان صدر میں انوار الحق کاکڑ کی بطور نگران وزیراعظم حلف برداری کی تقریب ہوئی، صدر پاکستان ڈاکٹر عارف علوی نے انوار الحق کاکڑ سے بطور نگران وزیراعظم عہدے کا حلف لیا۔

تقریب میں سابق وزیراعظم شہباز شریف کے علاوہ سپیکر راجہ پرویزاشرف، گورنر پنجاب بلیغ الرحمان، گورنر سندھ کامران ٹیسوری، نگراں وزیراعلیٰ پنجاب محسن نقوی اور پی ٹی آئی سینیٹر شہزاد وسیم سمیت سابق وفاقی وزراء اور اعلیٰ سیاسی و عسکری حکام شریک ہوئے۔

یاد رہے کہ انوار الحق کاکڑ نے پاکستان کے آٹھویں نگران وزیراعظم کے عہدے کا حلف اٹھایا ہے۔

انوار الحق کاکڑ کون ہیں؟

انوار الحق کاکڑ بلوچستان کے علاقے مسلم باغ قلعہ سیف اللہ میں 1971ء میں پیدا ہوئے، انہوں نے ابتدائی تعلیم سینٹ گرائمر فرانسس سکول کوئٹہ سے حاصل کی، اس کے بعد کیڈٹ کالج کوہاٹ میں داخلہ لیا، والد کے انتقال پر واپس کوئٹہ آ گئے، انوار الحق کاکڑ نے یونیورسٹی آف بلوچستان سے پولیٹیکل سائنس اور سوشیالوجی میں ماسٹر کیا اور کیریئر کا آغاز اپنے آبائی سکول میں پڑھانے سے کیا۔

سیاسی سفر

انگریزی، اردو، فارسی، پشتو، بلوچی اور براہوی زبانوں میں مکمل مہارت رکھنے والے انوار الحق کاکڑ نے 2008ء میں مسلم لیگ (ق) کے ٹکٹ پر کوئٹہ سے قومی اسمبلی کا الیکشن لڑا جس میں انہیں کامیابی نہ مل سکی اور وہ 2013ء میں بلوچستان حکومت کے ترجمان بن گئے۔

2008 ء میں انوار الحق کاکڑ کو بلوچستان عوامی پارٹی کا مرکزی ترجمان مقرر کیا گیا اور وہ بلوچستان سے مارچ 2018 میں آزاد حیثیت سے سینیٹ کے رکن منتخب ہوئے۔

انوار الحق کاکڑ نے سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے سمندر پار پاکستانیز اور ہیومن ریسورس ڈیویلپمنٹ کے چیئرمین کے طور پر کام کیا، اس کے علاوہ وہ سینیٹ کی بزنس ایڈوائزری کمیٹی، فنانس اینڈ ریونیو، خارجہ امور اور سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کے رکن بھی رہے۔

انوار الحق کاکڑ نے سینیٹ میں 2018 میں قائم ہونے والی بلوچستان عوامی پارٹی کیلئے پارلیمانی لیڈر کا کردار بھی ادا کیا اور 5 سال تک اس پوزیشن پر خدمات انجام دیں بعد ازاں ان کی جماعت نے نئی قیادت کے انتخاب کا فیصلہ کیا جس کے بعد انہیں تبدیل کر دیا گیا تھا۔

Advertisement