تازہ ترین
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن بلدیاتی انتخابات میں ای ایم وی کےاستعمال کاوعدہ نبھائے،شبلی فراز
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن کاکام ہےوہ جیسےچاہےمشین حاصل کرے،شبلی فراز
  • بریکنگ :- ای وی ایم کےحوالےسےوزارت نےاپناکام مقررہ وقت پرکیا،شبلی فراز
  • بریکنگ :- ہم نےالیکشن کمیشن کی ڈیمانڈ کےمطابق مشین بنائی،شبلی فراز
  • بریکنگ :- جس مشین کاانتخاب ہوگااس کاعالمی ٹینڈرجاری ہوگا،شبلی فراز
  • بریکنگ :- ہماری حکومت کامقصدکوئی خاص مشین نہیں،شبلی فراز
  • بریکنگ :- قانون بن چکا،2023 کےانتخابات ایم وی ایم پرہوں گے،شبلی فراز

اقوام متحدہ جعلی خبروں کو روکنے کیلئے فریم ورک تیار کرے: فواد چودھری

Published On 20 November,2021 08:18 pm

لاہور: (ویب ڈیسک) وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات فواد چودھری نے کہا ہے کہ ٹیکنالوجی کے دور میں بیانیہ کی جنگ نے ہتھیاروں سے لڑی جانے والی جنگ کی جگہ لے لی ہے، پروپیگنڈے کا مقابلہ کرنا پوری دنیا کے لئے بڑا چیلنج ہے، کچھ ممالک اور گروپس اپنے مخالفین کو بدنام کرنے کے لئے میڈیا کو بطور آلہ کار استعمال کرتے ہیں، اقوام متحدہ کو میڈیا پر جعلی خبروں اور نفرت انگیز مواد روکنے کے لئے فریم ورک تیار کرنا چاہئے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز پاکستان میں ہولی سی (ویٹیکن سٹی) کے سفیر کرسٹوف ال کاسیس سے ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

وفاقی وزیر اطلاعات نے کہا کہ پاکستان اور ہولی سی (ویٹیکن سٹی) جعلی خبروں اور نفرت انگیز مواد کے خاتمہ کیلئے مل کر کام کر سکتے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان اور ویٹیکن سٹی کو ایک دوسرے کی ثقافتی اور مذہبی اقدار کے بارے میں آگاہی حاصل کرنے کی ضرورت ہے۔ ماضی میں رابطے کے لئے ٹیکنالوجی کا فقدان تھا لیکن اب صورتحال بدل چکی ہے، خبریں تیزی سے پھیلتی ہیں، پروپیگنڈے کا مقابلہ کرنا پوری دنیا کے لئے بڑا چیلنج ہے۔

انہوں نے کہا کہ حکومتیں مرکزی دھارے کے میڈیا پر نفرت انگیز مواد کنٹرول کر سکتی ہیں لیکن کالعدم تنظیموں کی جانب سے سوشل میڈیا کا استعمال کیا جا رہا ہے۔

فواد چودھری نے کہا کہ وزارت اطلاعات و نشریات بین المذاہب ہم آہنگی اور پرامن بقائے باہمی کے فروغ کے لئے کام کر رہی ہے۔ پاکستان میں سکھ مذہب کے بانی بابا گرو نانک کے جنم دن کی تقریبات جاری ہیں، چینلز پر بابا گرو نانک کی زندگی اور تعلیمات پر خصوصی پروگرام نشر کئے جا رہے ہیں،

ویٹیکن سٹی کے سفیر نے دنیا میں امن کو یقینی بنانے کے لئے مختلف مذاہب کے پیروکاروں کے درمیان مذہبی ہم آہنگی کے فروغ پر زور دیتے ہوئے کہا کہ ہولی سی (ویٹیکن سٹی) پاکستان میں مقامی چرچوں کے ساتھ تعاون چاہتا ہے۔