تازہ ترین
  • بریکنگ :- پاک آرمی رائفل ایسوسی ایشن کے41ویں مقابلےاختتام پذیر
  • بریکنگ :- آرمی چیف کی بطورمہمان خصوصی تقریب میں شرکت،آئی ایس پی آر
  • بریکنگ :- تقریب کاانعقادجہلم گیریژن میں کیاگیا،آئی ایس پی آر
  • بریکنگ :- میگاشوٹنگ ایونٹ 26اکتوبرسےیکم دسمبرتک منعقدہوا
  • بریکنگ :- مقابلوں میں آرمی،نیوی اورایئرفورس کےنشانہ بازوں نےحصہ لیا
  • بریکنگ :- آرمی چیف نےنمایاں کارکردگی دکھانےوالوں میں انعامات تقسیم کیے
  • بریکنگ :- سول آرمڈفورسزاورشہریوں سمیت 2500سےزائدنشانہ بازوں کی شرکت
  • بریکنگ :- انٹرفارمیشنزمقابلوں میں ملتان کورپہلےاورمنگلاکوردوسرےنمبرپررہی
  • بریکنگ :- انٹرسروسزمیچوں میں پاک فوج نےتمام مقابلےجیت لیے
  • بریکنگ :- دیگرمقابلوں میں پنجاب رینجرزپہلے،گلگت بلتستان اسکاؤٹ دوسرےنمبرپر
  • بریکنگ :- آرمی چیف نےمارکس مین شپ میں اعلیٰ مہارتوں کےمظاہرےکوسراہا
  • بریکنگ :- ایک جوان کی شوٹنگ مہارت اس کاطرہ امتیازہے،آرمی چیف
  • بریکنگ :- بنیادی فوجی تربیت میں شوٹنگ مہارت مرکزی حیثیت رکھتی ہے،آرمی چیف

انسان کا نارمل درجہ حرارت تیزی سے کم ہونے لگا

Published On 04 November,2020 11:21 am

سانتا کلارا: (روزنامہ دنیا) جنوبی امریکا کے ملک بولیویا میں 16 سال پر محیط تحقیقی مطالعے میں انکشاف ہوا کہ صحت مند انسان کا جسمانی درجہ حرارت مسلسل کم ہوتا جارہا ہے۔

 میڈیا رپورٹ کے مطابق دلچسپ بات یہ ہے کہ مذکورہ مطالعہ بولیویا کے علاقے ‘‘سیمانی’’ میں رہنے والے قبائلیوں پر کیا گیا ہے۔ تحقیق نے معاملہ الجھا دیا ہے۔ ماہرین کو معلوم ہوا کہ سیمانی قبائل میں صحت مند بالغ افراد کا جسمانی درجہ حرارت پچھلے 16 سال سے مسلسل گرتا جارہا ہے جو آج 97.7 ڈگری فارن ہائٹ تک گرچکا ہے۔

آج ایک صحت مند بالغ انسان کا اوسط جسمانی درجہ حرارت 98.6 ڈگری فارن ہائٹ تسلیم کیا جاتا ہے۔ اس تناظر میں دیکھا جائے تو سیمانی قبائل کے جسمانی درجہ حرارت میں پچھلے 16 سال کے دوران 0.056 ڈگری فارن ہائٹ سالانہ کے حساب سے کمی ہو رہی ہے۔