تازہ ترین
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں کورونا سےمزید2اموات،این آئی ایچ
  • بریکنگ :- 24گھنٹےکےدوران ملک بھرمیں کورونا کے 13ہزار759ٹیسٹ کیے گئے
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں 24گھنٹےکےدوران 333کیسز رپورٹ،85کی حالت تشویشناک

مسجد نبوی ﷺ واقعہ پر کارروائی، خواجہ آصف نے مخالفت کردی

Published On 05 May,2022 11:32 pm

سیالکوٹ:(دنیا نیوز) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور وفاقی وزیر دفاع خواجہ آصف نے مسجد نبوی ﷺ واقعہ پر کارروائی کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ اعلیٰ قیادت سے درخواست ہے گرفتاریاں نہ کی جائیں، سیاسی رنگ دینے کی ضرورت نہیں، تھانوں اور مقدمات کا سہارا کیوں لینا؟ اللہ کی عدالت سے رجوع کریں۔

سیالکوٹ میں عید ملن پارٹی میں کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے لیگی رہنما نے کہا کہ میرا کوئی خاندان کا فرد میرے عہدے سے ناجائز فائدہ نہیں اٹھا سکتا، میرے گھر کے افراد تھانوں میں فون نہیں کریں گے، چار سال میں جو ہوا آپکو پتا ایک پل کی تکمیل ہم کر کے گئے تھے، آج بھی ادھر ہے، کینٹ سے سبلائم چوک جانے میں ڈیرھ گھنٹہ لگتا ہے۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ اربوں روپے کہاں گئے، مجھے بتایا جائے کہاں پیسے لگے، کچھ لوگوں کی ذاتی حالت بہت بہتر ہو گئی، ہم کسی مخالف پر مقدمہ نہیں بنائیں گے، مسجد نبویﷺ میں جو بے حرمتی ہوئی میں گواہ ہوں، اس مسجد کی بے حرمتی ہوئی ہے جس میں روضہ رسولﷺ ہے، اس مسجد میں ننگی گالیاں دی گئیں، یہ ہمارا اخلاق نہیں، ہم سیاسی مقدمات نہیں بنائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ چند قدم پر سبز گنبد ہوں اور گالیاں دینے والے بخشے جائیں، مالک خود ان سے حساب لے گا، مجھے تھانے میں جانے کی ضرورت نہیں، سیاست ڈال کر اس مسئلے کا تقدس پامال ہوگا، اعلیٰ قیادت سے درخواست کی ہے کہ گرفتاریاں نا کریں، پرچوں اور تھانوں کا سہارا کیوں لینا ہے، اللہ کی عدالت سے رجوع کریں، اسکو سیاست کا رنگ نا دیں۔