صدر مملکت کے بیانات انکے آئینی کردار سے متصادم: مرتضیٰ سولنگی

Published On 10 November,2023 10:19 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) نگران وفاقی وزیر اطلاعات مرتضیٰ سولنگی نے کہا ہے کہ صدر مملکت کے بیانات ان کے آئینی کردار سے متصادم نظر آ رہے ہیں۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مرتضیٰ سولنگی نے کہا کہ پوری قوم کی خواہش ہے کہ صدر مملکت جناب عارف علوی صاحب وفاق کی علامت کے طور اپنے فرائض سر انجام دیں اور ایسا تاثر نہ دیں جس سے لوگ انہیں ایک جماعت کے ترجمان کے طور پر دیکھیں۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ بدقسمتی سے جیسے جیسے ہم انتخابات کے قریب جا رہے ہیں صدر مملکت کے بیانات ان کے آئینی کردار سے متصادم نظر آ رہے ہیں، الیکشن کمیشن انتہائی تندہی اور ذمہ داری کیساتھ الیکشن کی طرف گامزن ہے۔

یہ بھی پڑھیں: سیاست عزت کیلئے کرتے ہیں، ن لیگ کو اصولوں کیلئے چھوڑا: ثنا اللہ زہری

مرتضیٰ سولنگی نے کہا کہ انتخابات کی تاریخ کا اعلان ہو گیا ہے اور تمام جماعتوں کو آئین اور قانون کے دائرے میں رہتے ہوئے سیاسی سرگرمیوں کی اجازت ہے، ایسے میں صدر مملکت کی طرف سے برابر مواقع فراہم نہ کرنے کی شکایت بہت افسوسناک ہے۔

انہوں نے کہا کہ صدر صاحب کو اچھی طرح سے معلوم ہے کہ آج لیول پلیئنگ فیلڈ کا مطالبہ کرنے والے لوگ ہی پچ اکھاڑ کر اور وکٹیں لے کر میدان سے بھاگے تھے۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ ہم امید کرتے ہیں کہ صدر صاحب الیکشن کمیشن کے آئینی ادارے کو اپنا کام کرنے دیں گے اور ایک سیاسی جماعت کے کارکن بننے کی بجائے پورے ملک کے صدر کے طور پر اپنے فرائض سر انجام دیں گے جو کہ ان کا آئینی فریضہ ہے۔

Advertisement