تازہ ترین
  • بریکنگ :- پنجاب میں اس وقت مضحکہ خیز تماشہ لگا ہوا ہے،فواد چودھری
  • بریکنگ :- حمزہ شہبازکے پاس پنجاب اسمبلی میں اکثریت نہیں رہی،فوادچودھری
  • بریکنگ :- تمام ادارےحمزہ شہبازکووزیراعلیٰ برقراررکھنےکیلئےزورلگارہےہیں،فوادچودھری
  • بریکنگ :- ایک ماہ سےزائدہوگیاپنجاب میں کوئی حکومت نہیں ،فوادچودھری
  • بریکنگ :- پنجاب میں اس وقت شدید انتظامی بحران ہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- سپریم کورٹ کے فیصلےکےبعدحمزہ شہبازکاالیکشن کالعدم ہوگیاہے،فوادچودھری

صادق سنجرانی کی فتح پر حکومتی ارکان کی مبارکبادیں، مریم کے طنزیہ ٹویٹس

Last Updated On 01 August,2019 09:30 pm

لاہور: (ویب ڈیسک) اپوزیشن اتحاد کو شکست کے بعد چیئر مین سینیٹ صادق سنجرانی کو حکومتی ارکان کی جانب سے مبارکبادیں ملنا کا سلسلہ شروع ہو گیا ہے۔

ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے پاکستان تحریک انصاف کے سینئر رہنما جہانگیر ترین خان کا کہنا ہے کہ صادق سنجرانی کو مبارکباد پیش کرتا ہوں۔ صادق سنجرانی اور پاکستان کو مبارک ہو۔

وزیراعظم کے مشیر عثمان ڈار کا سینیٹ الیکشن کے نتائج کے بعد ٹویٹر پر کہنا تھا کہ ابو بچاؤ تحریک ایک بار پھر ناکام! بہتر ہوگا کہ مریم صفدر اور بلاول زرداری اب ایک دوسرے پر عدم اعتماد کی تحریک شروع کر دیں۔

مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے چیئر مین سنییٹ کے الیکشن پر رد عمل دیتے ہوئے ٹویٹر پر کہنا تھا کہ ڈرا دھمکا کر چند ووٹ توڑنے کا کھیل قابل فخر نہیں، شرمناک فعل ہے جو ہر بار کامیاب نہیں ہو سکتا۔ جمہوری قوتوں کو ڈرے بغیر اپنا حق چھیننا چاہیے۔ سیلکٹد کب تک خیر منائیں گے؟ جعل سازی کو ایک دن مٹنا ہے۔ تحریک عدم اعتماد دوبارہ لانی چاہیے۔

ایک اور ٹویٹ میں ان کا کہنا تھا کہ چیئر مین سینیٹ کے الیکشن میں 65 ووٹ والے ہار گئے ہیں جبکہ 36 ووٹ والے جیت گئے ہیں، پاکستانیوں اب سمجھ آ گیا ہو گا کہ 2018ء کا قومی الیکشن۔

مریم نواز کا مزید کہنا تھا کہ نواز شریف کا مقابلہ میدان میں نہیں، میدان سے باہر ہی کیا جا سکتا ہے “خفیہ” بیلیٹ کے ذریعے۔ جو خفیہ نہیں ہو گا، نواز شریف جیت جائے گا انشاءاللہ۔

دوسری طرف قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر میاں شہباز شریف کا کہنا ہے کہ امیر ترین کا جادو چلا ہے۔ چیئر مین سینٹ کے الیکشن میں ضمیر فروشی ہوئی ہے، ہمارے 14 ووٹ گئےہیں، آج جمہوریت کو نقصان پہنچا ہے اور ضمیر فروشی ہوئی ہے۔ وفاقی وزیر آبی وسائل فیصل وواڈا کا کہنا تھا کہ لکھ کر دے دیا تھا کہ اپوزیشن بری طرح ناکام ہو گی، تحریک عدم اعتماد این آر او لینے کے لئے ایک سازش تھی، اپوزیشن کے پاس اب کسی قسم کا مینڈیٹ نہیں رہا۔

ان کا کہنا تھا کہ تحریک کی ناکامی سے اپوزیشن کا مکار اور مکروہ چہرہ بے نقاب ہوا، اپوزیشن میں غیرت ہو تو عوام کو اپنی شکل نہ دکھائیں، باریاں لینے والا بے ایمان ٹولہ ہر محاذ پر شکست کھا چکا ہے۔

وفاقی وزیر آبی وسائل فیصل واوڈا کا کہنا تھا کہ چیئر مین سینیٹ صادق سنجرانی کو مبارکباد یہ فتح پاکستان کی جیت ہے۔

معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے چیئرمین سینیٹ کیخلاف تحریک عدم اعتماد کی ناکامی پر اپوزیشن کو سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ آج ان کی کرپٹ سیاست مسترد ہوگئی ہے۔

میڈیا نمائندوں سے گفتگو میں انہوں نے چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کی فتح پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم کے بغض میں قرارداد پیش کی گئی لیکن آج اپوزیشن کی صفوں میں بغاوت ہوئی اور ان کی کرپٹ سیاست مسترد ہو گئی۔

ان کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف کی حکومت عوام کی بہتری کا ایجنڈا لے کر آئی ہے۔ مشکلات کے باوجود عمران خان ملک کی بہتری کیلئے کام کر رہے ہیں۔ ان کی قیادت میں ملک ترقی کرے گا۔