تازہ ترین
  • بریکنگ :- طالبان سےبات کررہےہیں دیگر گروپس کوبھی حکومت میں شامل کریں،فوادچودھری
  • بریکنگ :- پاکستان افغانستان میں استحکام چاہتاہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- افغان حکومت کوتسلیم کرنےسےمتعلق خطےکےممالک کوساتھ لےکرچل رہےہیں،فوادچودھری
  • بریکنگ :- ڈالرکی افغانستان اسمگلنگ کےباعث روپےکی قدرمیں کمی آئی،فوادچودھری
  • بریکنگ :- رواں سال گندم اورگنےکی ریکارڈ پیداوار ہوئی ہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- کوروناکےباعث دنیابھرمیں اشیائےضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ ہوا،فوادچودھری
  • بریکنگ :- زراعت کےشعبےمیں ملکی معیشت میں 1100ارب کااضافہ کیاگیا،فوادچودھری
  • بریکنگ :- ٹیکسٹائل کی صنعت کوبھی فروغ حاصل ہورہاہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- تعمیرات کےشعبےمیں بھی ریکارڈ سرمایہ کاری آرہی ہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- پڑوسی ممالک کےساتھ مل کرافغان حکومت کوتسلیم کیاجائےگا،فوادچودھری
  • بریکنگ :- افغانستان میں امن کیلئےہماری کوششیں جاری ہیں،فوادچودھری
  • بریکنگ :- افغانستان کی صور تحال کااثربراہ راست پاکستان پرہوتاہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- مودی اوران کی جماعت کی وجہ سےحالات میں بہتری نہیں آرہی،فوادچودھری
  • بریکنگ :- پاک بھارت میچ کیلئےبہت پرجوش ہیں،فوادچودھری
  • بریکنگ :- دلی میں آج جلسہ کریں تومودی سے بڑاجلسہ ہوگا ،فوادچودھری

کورونا کی بگڑتی صورتحال، سندھ کے تمام سکول 6 اپریل سے بند ہو جائیں گے

Published On 04 April,2021 04:21 pm

کراچی: (دنیا نیوز) صوبائی وزیر تعلیم سعید غنی نے کہا ہے کہ محکمہ تعلیم نے پندرہ دن کے لیے آٹھویں جماعت تک فزیکل کلاسز معطل کر دی ہیں۔

سماجی رابطوں کی ویبس سائٹ ٹویٹر پر سعید غنی نے اس حوالے سے محکمہ تعلیم کا نوٹیفیکیشن بھی شیئر کیا۔ اس کے مطابق 6 اپریل سے اگلے پندرہ روز کیلئے تمام سرکاری اور پرائیوٹ تعلیمی اداروں میں کلاسیں معطل رہیں گی۔

نوٹیفیکیشن کے مطابق بچوں کی تعلیم آن لائن، ہوم ورک اور دیگر ذرائع سے جاری رکھی جا سکتی ہے۔ کلاسز معطل کرنے کا فیصلہ کورونا کی صورتحال کے پیش نظر کیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: کورونا کی تیسری لہر: سندھ میں سکولوں کو 15 دن کیلئے بند کرنے کی تجویز

خیال رہے کہ جچھ روز قبل محکمہ تعلیم سندھ کی سٹیرنگ کمیٹی کے ممبران نے سکولوں کو پندرہ دن کے لیے بند کرنے کی تجویز دی جس کی کچھ ممبران نے مخالفت کرتے ہوئے تجویز پیش کی کہ آٹھویں جماعت تک سکولوں کو بند کر دیا جائے جبکہ میٹرک کلاسز جاری رکھی جائیں۔

زیادہ تر ممبران کی اکثریت نے آٹھویں جماعت تک سکول بند کرنے کی حمایت کی تھی۔ پرائیویٹ سکولز کے نمائندوں نے اعتراض کیا کہ مارکیٹیں کھلی ہیں تو سکول کیوں بند کیے جائیں۔ وزیر تعلیم سعید غنی نے اجلاس میں بتایا کہ کمیٹی میں سامنے آنے والی تجاویز کو این سی او سی میں پیش کیا جائے گا۔