تازہ ترین
  • بریکنگ :- کوئٹہ اورلسبیلہ کےعلاوہ بلوچستان کے 32اضلاع میں بلدیاتی الیکشن
  • بریکنگ :- بلدیاتی انتخابات کےلیےبیلٹ پیپرزاورانتخابی میٹریل کی ترسیل کاعمل مکمل
  • بریکنگ :- پولنگ صبح 8بجےسےشام 5بجےتک بغیرکسی وقفےکےجاری رہےگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:7 میونسپل کارپوریشن،838یونین کونسلزمیں پولنگ ہوگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:5ہزار345دیہی وارڈاور9ہزار14شہری وارڈکےلیےپولنگ ہوگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:35لاکھ52ہزار298ووٹرز اپنا حق رائے دہی استعمال کریں گے
  • بریکنگ :- کوئٹہ:20لاکھ 6ہزار274مرداور15لاکھ46ہزار124خواتین ووٹرزہیں
  • بریکنگ :- کوئٹہ:32اضلاع میں 5ہزار226پولنگ اسٹیشنزقائم
  • بریکنگ :- کوئٹہ:2ہزار54پولنگ اسٹیشنزانتہائی حساس،ایک ہزار974حساس قرار
  • بریکنگ :- الیکشن میں16 ہزار195امیدوارمدمقابل،102 امیدواربلامقابلہ منتخب
  • بریکنگ :- کوئٹہ:پولنگ اسٹیشنزپرپولیس،لیویزاورایف سی کےجوان تعینات ہوں گے

دھماکے کے وقت چینی سفیر ہوٹل میں موجود نہیں تھے، شیخ رشید کی تصدیق

Published On 21 April,2021 11:47 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے تصدیق کی ہے کہ چینی سفیر نونگ رونگ اسی ہوٹل میں قیام پذیر تھے تاہم دھماکے کے وقت وہ وہاں موجود نہیں تھے، وہ بالکل خیریت سے ہیں۔

شیخ رشید کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ کوئٹہ دھماکا دشمن کی سازش ہے۔ ملک میں دہشتگردی کی لہر پلاننگ کے تحت آ رہی ہے، یہ انٹرنیشنل ایجنڈا ہے۔

وزیر داخلہ نے خطرات سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ بڑے شہروں میں دہشتگردی کی اطلاعات ہیں۔ راولپنڈی، اسلام آباد، پشاور اور کراچی میں دہشتگردی ہو سکتی ہے۔ اداروں کی جانب سے الرٹ جاری کر دیا گیا ہے۔

انہوں نے عزم کا اظہار کیا کہ دشمن کو شکست دے کر ان کو انجام تک پہنچائیں گے۔ پاکستان کو نقصان پہنچانے کی سازشیں ناکام ہوں گی۔ کوئٹہ دھماکے کی تحقیقات کرائی جائیں گی۔

دوسری جانب وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے کوئٹہ دھماکے کی شدہد کرتے ہوئے واقعے کی رپورٹ طلب کر لی ہے۔ انہوں نے دھماکے میں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا۔

انہوں نے جاں بحق افراد کے لواحقین سے تعزیت کرتے ہوئے کہا کہ امن وامان کی صورتحال خراب کرنے کی کسی کو اجازت نہیں دی جائے گی۔ دہشت گردی کے ناسور کے خاتمے کے لیے پوری قوم متحد ہے۔

وزیراعلیٰ بلوچستان نے فورسز کو سیکیورٹی کے فول پروف اقدامات کرنے کی ہدایت دی اور کہا کہ دہشت گردوں نے اپنی بزدلانہ کارروائیوں کے لیے مقامی ہوٹل کو نشانہ بنایا۔

ان کا کہنا تھا کہ حکومت کے احسن اقدامات سے بہت حد تک دہشت گردی پر قابو پایا گیا ہے۔ انہوں نے زخمیوں کو علاج معالجے کی بہترین سہولیات فراہم کرنے کی بھی ہدایت جاری کی ہیں۔

ادھر ڈی آئی جی اظہر اکرم نے بھی تصدیق کی ہے کہ چینی سفیر ہوٹل کے اندر موجود نہیں تھے۔ انہوں نے بتایا کہ زخمیوں کو سول ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔ دھماکے میں پانچ سے چھ گاڑیوں کو نقصان پہنچا جبکہ 4 افراد جاں بحق اور 12 زخمی ہیں۔