اعجاز چودھری کے پروڈکشن آرڈر سے متعلق درخواست قابل سماعت ہونے پر فیصلہ محفوظ

Published On 10 November,2023 12:43 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) اسلام آباد ہائی کورٹ نے اعجاز چودھری کی پروڈکشن آرڈر جاری کرنے کی درخواست قابل سماعت ہونے پر فیصلہ محفوظ کرلیا۔

غزہ کی صورتحال پر بلائے گئے سینیٹ اجلاس میں شرکت کے لئے پی ٹی آئی سینیٹر اعجاز چودھری کے پروڈکشن آرڈر جاری کرنے کی درخواست پر اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس محسن اختر کیانی نے سماعت کی۔

اعجاز چودھری کے وکیل نے عدالت میں کہا کہ پروڈکشن آرڈر کے لئے درخواست دی ہے لیکن عمل درآمد نہیں ہوا، لہٰذا سینیٹ اجلاس کے لیے پروڈکشن آرڈر جاری کیے جائیں۔

اس پر عدالت نے کہا کہ یہ تو سینیٹ کی صوابدید ہے جس بھی ممبر کو بلائیں، یہ ایوان بالا کا اندرونی معاملہ ہے، لہٰذا عدالت اس میں کوئی ہدایت نہیں دے سکتی، بلانے کی ہدایت دی تو کل کسی بھی ممبر کو نہ بلانے کی ہدایت بھی دینا ہوگی۔

وکیل کا کہنا تھا کہ سینیٹر اعجاز چودھری پنجاب کی نمائندگی کرتے ہیں، شرکت کی اجازت ہونی چاہیے، پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں شرکت کے لیے سپیکر نے پروڈکشن جاری کیے تھے، اسی لئے چیئرمین سینیٹ کو ہدایات دی جائیں کہ وہ پروڈکشن آرڈر جاری کریں۔

جسٹس محسن اختر نے استفسار کیا کہ کیا عدالت چیئرمین سینیٹ کو ہدایات دے سکتی ہے؟ درخواست گزار سینیٹ کا ممبر ہے سینیٹ نے بلانا ہے کورٹ نے نہیں۔

اسلام آباد ہائی کورٹ نے وکیل درخواست گزار کے مختلف قوانین اور عدالتی فیصلوں کے حوالوں کے بعد درخواست کے قابل سماعت ہونے پر فیصلہ محفوظ کر لیا۔

Advertisement