تازہ ترین
  • بریکنگ :- حماداظہرکی قطرکےوزیرتوانائی سعدشیریدہ الکعبی سےورچوئل ملاقات
  • بریکنگ :- عالمی قلت کےباوجودایل این جی کی بروقت سپلائی کوسراہتےہیں،حماداظہر
  • بریکنگ :- قطرنئےایل این جی ٹرمینل منصوبوں میں سرمایہ کاری کرےگا،سعدشیریدہ الکعبی
  • بریکنگ :- پاکستان ایل این جی منصوبوں پرتیزی سےکام کررہاہے،حماداظہر

وفاقی حکومت نے پہلے دو سال 11 ہزار 300 ارب روپے کا قرض لیا

Published On 22 August,2020 05:24 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) پاکستان تحریک انصاف حکومت کے پہلے دو سال میں اب تک 11 ہزار 300 ارب روپے کا قرض لیا جا چکاہے۔ دوسری جانب 2014 سے 2018 تک چار سالوں میں 10 ہزار 700 ارب روپے کا قرض لیا گیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف حکومت کے دو سال کے دوران قرضوں کے بوجھ میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے، اب تک 11 ہزار 300 ارب روپے کا قرض لیاجا چکاہے۔

وزارت خزانہ کی دستاویز کے مطابق 2009 سے 2013 تک چار سال میں پاکستان کا قرض 8200 ارب روپے جبکہ 2014 سے 2018 تک مزید 10 ہزار 700 ارب روپے بڑھا۔اب 2019 اور 2020 کے صرف دو سال میں 11 ہزار 300 ارب روپے کا قرض لیا گیا۔

گزشتہ دو سال میں قرضوں کا پرائمری بیلنس 2500 ارب روپے بڑھا جبکہ سود میں 4700 ارب روپے کا اضافہ ہوا۔دو سال میں ڈالر کی قدر بڑھنے سے بھی قرض 3500 ارب روپے بڑھا۔۔