تازہ ترین
  • بریکنگ :- وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدارکی مریم اورنگزیب کےبیان کی مذمت
  • بریکنگ :- بدتہذیبی اوربدتمیزی مسلم لیگ ن کاوتیرہ ہے،وزیراعلیٰ پنجاب
  • بریکنگ :- لیگی رہنمابی بی شہیدکیخلاف بھی غیرشائستہ الفاظ استعمال کرتےرہے،عثمان بزدار
  • بریکنگ :- مریم اورنگزیب نےاخلاقی پستی کامظاہرہ کیا،وزیراعلیٰ پنجاب
  • بریکنگ :- مریم اورنگزیب نےہرپاکستانی کی دل آزاری کی،وزیراعلیٰ پنجاب
  • بریکنگ :- مریم اورنگزیب نےثابت کیان لیگ میں اخلاقی اقدارکاوجودنہیں،عثمان بزدار
  • بریکنگ :- نازیباالفاظ پرانہیں قوم سےمعافی مانگنی چاہیے،وزیراعلیٰ پنجاب

یکم جنوری سے پیٹرولیم مصنوعات مہنگی کرنے کی تیاری،اوگرا نےسمری بھجوادی

Published On 30 December,2020 04:20 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) وفاقی حکومت نے عوام پر مہنگائی کا ایک اور بوجھ ڈالتے ہوئے آئندہ سال کے آغاز میں ہی پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کی تیاری کر لی ہے۔

آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کی سمری پیٹرولیم ڈویژن کو بھجوا دی ہے۔ ذرائع کے مطابق اوگرا کی سمری میں پیٹرول 2 روپے 96 پیسے فی لیٹر مہنگا کرنے کی تجویز دی گئی ہے۔

ذرائع کے مطابق حکومت ہائی سپیڈ ڈیزل 3 روپے 12 پیسے فی لیٹر مہنگا کرنے پر غور کر رہی ہے جبکہ مٹی کا تیل اور لائٹ ڈیزل کی قیمت بھی اضافہ کرنے کی تجویز ہے۔ وزارت خزانہ کل نئی قیمتوں کا اعلان کرے گی۔

یہ بھی پڑھیں: حکومت نے پیٹرول کی قیمت میں 3 روپے فی لٹر اضافہ کر دیا

خیال رہے کہ ابھی پندرہ روز قبل 15 دسمبر کو پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں فی لٹر 5 روپے کا اضافہ کیا گیا تھا۔

وزارت خزانہ کی طرف سے جاری کردہ نوٹیفکیشن کے مطابق پیٹرول کی فی لٹر قیمت اس وقت 103 روپے 69 پیسے ہے۔ دوسری طرف ہائی سپیڈ ڈیزل 3 روپے اضافے کے بعد 108 روپے 44 پیسے پر فروخت ہو رہا ہے جبکہ مٹی کا تیل 5 روپے اضافے کے بعد 70 روپے 29 پیسہ کا کر دیا گیا تھا۔

لائٹ ڈیزل آئل کی قیمت بھی 5 روپے اضافے کے بعد 67 روپے 86 پیسہ فی لیٹر مقرر ہے۔