تازہ ترین
  • بریکنگ :- حکومتی مشینری مسائل حل نہیں کرےگی توہم کریں گے،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- سابق بلدیاتی نمائندےعوامی مسائل کےحل کیلئےکوششیں تیزکردیں،خالدمقبول
  • بریکنگ :- جولوگ حکومتی بنچزپربیٹھناچاہتےہیں وہ ایم کیوایم سےامیدلگائےبیٹھےہیں،خالدمقبول
  • بریکنگ :- کراچی:ہمیں لیڈرنہیں کارکن چاہئیں،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- جسےایم کیوایم میں آناہےبغیرکسی شرط کےآئے،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- کراچی:ہم کسی کےآلہ کارنہیں بنیں گے،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- جس دن حجت تمام ہوئی ہم حکومت ہی نہیں ایوان بھی چھوڑدیں گے،خالدمقبول
  • بریکنگ :- ایم کیوایم کاہروہ کارکن لیڈرہےجواحساس ذمہ داری رکھتاہے،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- حکومت نےعوامی مسائل حل نہیں کیےتوہم شیڈوکیبنٹ بنائیں گے،خالدمقبول

کشمیر سمیت خطے کے عوام دیرپا امن کا حق رکھتے ہیں: آرمی چیف

Published On 04 February,2021 07:20 pm

لاہور: (ویب ڈیسک) آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے کہ کشمیر سمیت خطے کے عوام دیرپا امن کا حق رکھتے ہیں۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کی طرف سے جاری کردہ بیان کے مطابق پاک فوج کے سپہ سالار جنرل قمر جاوید باجوہ نے لاہور گریژن کا دورہ کیا۔ کور کمانڈر لاہور لیفٹیننٹ جنرل محمد عبد العزیز نے آرمی چیف کا استقبال کیا۔

آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف نے پیشہ ورانہ امور، داخلی اور خارجی صورتحال پر اظہار خیال کیا اور گریژن کے افسران سے خطاب کیا جبکہ خطے میں دیرپا امن سے متعلق پاکستانی وژن پر روشنی ڈالی۔ آرمی چیف نے مشرقی سرحد اور کشمیر کی صورتحال پر بھی بات کی۔

یہ بھی پڑھیں: پاکستان اور انڈیا کو پرانے تنازع مسئلہ کشمیر کو حل کرنا چاہیے: آرمی چیف

اس موقع پر آرمی چیف نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر سمیت خطے کے عوام دیرپا امن کا حق رکھتے ہیں۔ کشمیریوں کی خواہشات کے مطابق کشمیر کے حل کے لیے پر عزم ہیں۔ تنازع کشمیر کا حل کشمیریوں کے امنگوں کے مطابق ضروری ہے۔

جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا تھا کہ ہائبرڈ جنگ کے چیلنجز میں مزید چوکنا اور تیار رہنے کی ضرورت ہے۔

یاد رہے کہ دو روز قبل پی اے ایف اکیڈمی اصغر خان میں خطاب کرتے ہوئے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا تھا کہ ہماری امن کی خواہش کوکمزوری نہ سمجھاجائے، مسلح افواج ہر طرح کےخطرات سےنمٹنےکی صلاحیت رکھتی ہیں۔

آئی ایس پی آر کے مطابق پی اے ایف اکیڈمی اصغرخان میں مختلف کورسز کی گریجویشن تقریب منعقد ہوئی جس کے مہمان خصوصی آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ تھے۔آرمی چیف نے پاس آؤٹ کیڈٹس کومبارکباد دی۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے آرمی چیف نے کہا کہ پاکستان امن پسندملک ہے، پاکستان نےعلاقائی اورعالمی امن کیلئےبے پناہ قربانیاں دی ہیں، ہم امن بقائےباہمی اورباہمی احترام پرکاربندہیں، وقت ہےہرطرف امن کےلئےہاتھ آگے بڑھائیں۔

آرمی چیف نےواضح کیا کہ پاکستان اوربھارت دیرینہ تنازع کشمیر کو حل کریں، تنازع کشمیر کو کشمیری عوام کی امنگوں کےمطابق حل کیاجاناچاہیے، تنازع کشمیرکاحل انسانی المیےکومنطقی انجام تک پہنچانےکاباعث بنےگا،یہ ہرجانب امن کاہاتھ بڑھانےکاوقت ہے۔

آرمی چیف نے دشمن کو دوٹوک پیغام دیتے ہوئے کہا کہ ہماری امن کی خواہش کوکمزوری نہ سمجھاجائے، مسلح افواج ہرطرح کےخطرات سےنمٹنےکی صلاحیت رکھتی ہیں۔

پاک فوج کے سپہ سالار نے کہا کہ ملک دشمنوں کی سازشوں کوناکام بنانےمیں افواج کی ہم آہنگی مثالی ہے، مسلح افواج نےداخلی سیکیورٹی صورتحال بہتر بنانے میں کردار ادا کیا۔

آرمی چیف نے دہشت گردی کیخلاف جنگ میں پاک فضائیہ کی خصوصی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ شاہینوں نے آپریشن سوئفٹ ریٹارٹ میں پیشہ ورانہ مہارت کا مظاہرہ کیا، آپریشن سوئفٹ ریٹارٹ ہماری صلاحیتوں اورعزم کا ثبوت ہے۔