تازہ ترین
  • بریکنگ :- کراچی:ڈسٹرکٹ ساؤتھ کھارادرمیں انسدادتجاوزات سیل کی کارروائی
  • بریکنگ :- کراچی:فٹ پاتھ پرقائم پتھارےاورالیکٹرک جنریٹرتحویل میں لےلیاگیا

کورونا وبا کو تیزی سے پھیلنے دیا تو کوئی سسٹم مقابلہ نہیں کرسکتا: اسد عمر

Published On 30 April,2021 11:48 am

اسلام آباد: (دنیا نیوز) اسد عمر نے کہا ہے کہ کورونا میں اضافہ جاری ہے، بیماری کو تیزی سے پھیلنے دیا تو کوئی سسٹم مقابلہ نہیں کرسکتا، ایس او پیز پر عمل درآمد وقت کی اہم ضرورت ہے۔

وفاقی وزیر منصوبہ بندی اسد عمر نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں تشویشناک مریضوں کی تعداد 5 ہزار 360 ہو چکی، تشویشناک مریضوں کی تعداد گزشتہ سال جون کے مقابلے میں57 فیصد زائد ہے، ابھی تک اتنے زیادہ کورونا کیسز منظم طریقے نمٹائے گئے، ہیلتھ سسٹم، آکسیجن پیدوار سے بیڈز کی استعداد کار بڑھانے کے باعث ممکن ہوا۔

اسد عمر کا کہنا تھا کہ فیصلہ کن فیصلہ سازی اعدادوشمار کے ڈیٹا پر مبنی تجزیاتی نقطہ نظر رہا ہے، قومی سطح پر مربوط کوششوں، محنتی ٹیموں سے مشکل چیلنج میں کوششیں جاری رکھی، چیلنج ابھی ختم نہیں ہوا، کورونا وائرس میں اضافہ جاری ہے، احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کی ضرورت ہے۔

دوسری جانب نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق کورونا وائرس سے 131 افراد جاں بحق ہوگئے، جس کے بعد اموات کی تعداد 17 ہزار 811 ہوگئی۔ پاکستان میں کورونا کے تصدیق شدہ کیسز کی تعداد 8 لاکھ 20 ہزار 823 ہوگئی۔

گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 5 ہزار 112 نئے کیسز رپورٹ ہوئے، پنجاب میں 3 لاکھ ایک ہزار 114، سندھ میں 2 لاکھ 82 ہزار 445، خیبر پختونخوا میں ایک لاکھ 17 ہزار 557، بلوچستان میں 22 ہزار 278، گلگت بلتستان میں 5 ہزار 305، اسلام آباد میں 75 ہزار 67 جبکہ آزاد کشمیر میں 17 ہزار 57 کیسز رپورٹ ہوئے۔

ملک بھر میں اب تک ایک کروڑ 17 لاکھ 88 ہزار 127 افراد کے ٹیسٹ کئے گئے، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 49 ہزار 099 نئے ٹیسٹ کئے گئے، اب تک 7 لاکھ 11 ہزار 465 مریض صحتیاب ہوچکے ہیں جبکہ 5 ہزار 360 مریضوں کی حالت تشویشناک ہے۔

پاکستان میں کورونا سے ایک دن میں 131 افراد جاں بحق ہوئے جس کے بعد وائرس سے مرنے والوں کی تعداد 17 ہزار 811 ہوگئی۔ پنجاب میں 8 ہزار 410، سندھ میں 4 ہزار 633، خیبر پختونخوا میں 3 ہزار 274، اسلام آباد میں 679، بلوچستان میں 234، گلگت بلتستان میں 106 اور آزاد کشمیر میں 475 مریض جان سے ہاتھ دھو بیٹھے۔