تازہ ترین
  • بریکنگ :- وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی کااردن کےہم منصب سےٹیلیفونک رابطہ
  • بریکنگ :- اسلام آباد: دوطرفہ تعلقات، باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال
  • بریکنگ :- پاک اردن تعلقات یکساں اقدارکی بنیاد پراستوارہیں،شاہ محمود قریشی
  • بریکنگ :- دونوں وزرائے خارجہ کا تعاون جاری رکھنے کے عزم کا اظہار
  • بریکنگ :- شاہ محمودقریشی کادوطرفہ تعاون کومزیدمستحکم بنانےکی ضرورت پرزور

بیماریوں کی روک تھام کے لئے مربوط نیٹ ورک تیار کیا جائے، صدر مملکت کی ہدایت

Published On 20 August,2021 08:29 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے قدرتی آفات کے متاثرین کی موثر طریقے سے مدد اور بیماریوں کی روک تھام کے لئے مربوط نیٹ ورک تیار کرنے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ ابتدائی طبی امداد کی بروقت فراہمی 59 فیصد جانیں بچانے میں مدد دے سکتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ سکولوں اور کالجوں میں طلباء کو اس حوالے سے مناسب تربیت فراہم کرنے کی ضرورت ہے۔ وہ جمعہ کو انجمن ہلال احمر پاکستان کی مینجنگ باڈی کے اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔

اجلاس میں مینجنگ باڈی کے ممبران بشمول چیئرمین ہلال احمر پاکستان ابرارالحق ، آصف باجوہ ، ڈاکٹر ارشاد محمد اور ڈاکٹر مودات حسین رانا کے علاوہ متعلقہ سینئر حکام نے بھی شرکت کی ۔اس موقع پر ابرار الحق نے اجلاس کو حادثات اور آفات کے دوران انسانیت کی خدمت میں ہلال احمر پاکستان کے کردار کے بارے میں بریفنگ دی ۔

اجلاس میں قدرتی آفات کے متاثرین کو فوری مدد کی فراہمی کے سلسلے میں تنظیم کو مضبوط بنانے کے لئے مختلف تجاویز پیش کی گئیں ۔ اس موقع پر صدر مملکت نے ہلال احمر ، نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی ، شعبہ صحت اور دیگر سرکاری اداروں کے درمیان بہتر راوبط قائم کرنے کی ضرورت پر زور دیا تاکہ ناگہانی آفات کی صورت میں بروقت اور موثر اقدامات کئے جاسکیں ۔

انہوں نے ہلال احمر پر زور دیا کہ وہ ضرورت مندوں کے لئے خون کی دستیابی یقینی بنانے کے لئے عطیہ مہم کی قیادت کرے ۔صدر مملکت نے ملک میں نوجوانوں کی ترقی کے لئے انجمن ہلال احمر پاکستان اور وزیراعظم کے کامیاب جوان پروگرام مابین تعاون کی ضرورت پر بھی زور دیا۔