تازہ ترین
  • بریکنگ :- کراچی:نارتھ ناظم آبادبلاک ایس میں مبینہ پولیس مقابلہ
  • بریکنگ :- زخمی سمیت 2ملزم گرفتار،اسلحہ،نقدی اورموبائل فون برآمد،پولیس
  • بریکنگ :- کراچی:ملزم 10سےزائدافرادسےلوٹ مارکےبعدفرارہورہےتھے،پولیس
  • بریکنگ :- مبینہ مقابلےکےبعدایک ملزم کوشہریوں نےتشددکانشانہ بھی بنایا،پولیس

ضنی انتخاب: پی ٹی آئی کو بڑا دھچکا، جمشید اقبال چیمہ اور مسرت چیمہ کی اپیلیں خارج

Published On 05 November,2021 12:37 pm

لاہور: (دنیا نیوز) لاہور ہائیکورٹ نے این اے 133 کے ضمنی انتخاب میں پی ٹی آئی امیدوار جمشید اقبال چیمہ اور مسرت چیمہ کی اپیلیں خارج کر دیں۔ عدالت نے کاغذات نامزدگی مسترد کرنے کا فیصلہ برقرار رکھا۔

خیال رہے تحریک انصاف کے امیدوار جمشید اقبال چیمہ اور مسرت چیمہ نے لاہور ہائیکورٹ کے ایپلٹ الیکشن ٹربیونل کے روبرو اپیل دائر کی، جس میں کاغذات نامزدگی مسترد کرنے کے فیصلے کو چیلنج کیا گیا تھا

اپیل میں موقف اپنایا گیا کہ ریٹرنگ آفیسر کا کاغذات نامزدگی مسترد کرنے کا فیصلہ حقائق سے مطابقت نہیں رکھتا، ریٹرننگ آفیسر نے تجویز کنندہ کا تعلق این اے 133 سے نہ ہونے پر کاغذات نامزدگی مسترد کیے۔ جمشید چیمہ نے اپیل میں دعویٰ کیا تجویز کنندہ بلال حسین کا تعلق اسی یونین کونسل سے ہے۔

درخواست میں تحریک انصاف نے نشاندہی کی کہ تجویز کنندہ کا شناختی کارڈ، ڈومیسائل تمام دستاویزات این اے 133 سے ہے، اس لیے ریٹرننگ آفیسر کا کاغذات نامزدگی مسترد کرنے کا اقدام کالعدم قرار دیا جائے۔

واضح رہے ریٹرننگ آفیسر نے پاکستان تحریک انصاف کے امیدوار جمشید اقبال چیمہ اور ان کی کورنگ امیدوار مسرت جمشید اقبال چیمہ کے کاغذات نامزدگی مسترد کر دیئے تھے۔

ریٹرننگ افسر نے جمشید اقبال چیمہ اور مسرت چیمہ کے تجویز کنندہ حلقے کا نہ ہونے کی بنیاد پر کاغزات نامزدگی مسترد کیے تھے۔ مسلم لیگ ن کی امیدوار شائستہ پرویز کی جانب سے ریٹرننگ افسر کے روبرو اعتراضات دائر کیے تھے۔