تازہ ترین
  • بریکنگ :- سانگھڑ : کھپرو اور بیرانی سےپیپلزپارٹی امیدوارکامیاب
  • بریکنگ :- سانگھڑ:ٹاؤن کمیٹی کھپرو کے 18 میں سے 13 وارڈز میں پیپلز پارٹی کامیاب
  • بریکنگ :- سانگھڑ:بیرانی ٹاؤن کمیٹی کےپانچوں وارڈز سے پیپلزپارٹی کا کلین سویپ
  • بریکنگ :- لاڑکانہ:پیپلزپارٹی نوڈیرو کے تمام 7 وارڈز سے کامیاب
  • بریکنگ :- خان پورمہرکے تمام 6 وارڈز سے پیپلزپارٹی کوبرتری
  • بریکنگ :- مورو: میونسپل کمیٹی وارڈ نمبر 3کا مکمل غیرحتمی نتیجہ
  • بریکنگ :- مورو:پیپلزپارٹی کے جان عالم 630 ووٹ لےکرکامیاب
  • بریکنگ :- ٹاؤن کمیٹی دوڑ کے 9 وارڈز سےپیپلزپارٹی کےتمام امیدوار کامیاب
  • بریکنگ :- مورو: جی ڈی اےکے اکرم قریشی 209ووٹ لےکر دوسرے نمبر پر
  • بریکنگ :- مورو : میونسپل کمیٹی وارڈ نمبر 6 کامکمل غیر سرکاری غیر حتمی نتیجہ
  • بریکنگ :- مورو:پیپلز پارٹی کےدوست علی سولنگی 460 ووٹ لےکر کامیاب
  • بریکنگ :- مورو: پی ٹی آئی کےفداحسین بھٹو 170ووٹ لےکر دوسرے نمبر پر
  • بریکنگ :- جیکب آباد: میونسپل کمیٹی کےوارڈ نمبر 4کامکمل غیر حتمی نتیجہ
  • بریکنگ :- جیکب آباد :پی ٹی آئی کے غلام حسین عمرانی 388 ووٹ لےکر کامیاب
  • بریکنگ :- جیکب آباد :پیپلزپارٹی کے نور محمد دھرپالی 380 ووٹ لےسکے
  • بریکنگ :- پنوعاقل: میونسپل کمیٹی کے وارڈ نمبر 3کا مکمل غیرحتمی نتیجہ
  • بریکنگ :- پنوعاقل :پیپلزپارٹی کےمیاں عبدالقوی 588 ووٹ لےکر کامیاب
  • بریکنگ :- پنوعاقل: آزاد امیدوارعبدالرؤف 307 ووٹ لےکر دوسرے نمبر پر
  • بریکنگ :- ٹھل: میونسپل کمیٹی وارڈ نمبر 9 کا مکمل غیر سرکاری غیر حتمی نتیجہ
  • بریکنگ :- ٹھل :پیپلزپارٹی کے جنید سرکی 414 ووٹ لے کر کامیاب
  • بریکنگ :- ٹھل :ایس یو پی کےعلی حسن 247 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر
  • بریکنگ :- شہدادکوٹ: میونسپل کمیٹی کےوارڈ نمبر10کامکمل غیرحتمی نتیجہ
  • بریکنگ :- شہدادکوٹ:پیپلز پارٹی کےمیر باران خان 517 ووٹ لےکرکامیاب
  • بریکنگ :- شہدادکوٹ :آزاد امیدوار احمد نواز 487 ووٹ لےکر دوسرے نمبر پر
  • بریکنگ :- گمبٹ :میونسپل کمیٹی کے وارڈ نمبر 4 کا مکمل غیر سرکاری غیرحتمی نتیجہ
  • بریکنگ :- گمبٹ :پیپلزپارٹی کے سجادعلی شاہ 310ووٹ لے کر کامیاب
  • بریکنگ :- گمبٹ :جی ڈی اے کے غلام جابرشاہ 87 ووٹ لےکر دوسرے نمبر پر

وفاق کیساتھ تنازع، وزیراعلیٰ سندھ نے 11 پولیس افسران کو چارج چھوڑنے سے روک دیا

Published On 29 November,2021 05:58 pm

کراچی: (دنیا نیوز) وفاق کے ساتھ تنازع کے بعد وزیراعلیٰ سندھ سیّد مراد علی شاہ نے تمام ڈی آئی جیز اور پی اے ایس افسران کو چارج چھوڑنے سے روک دیا۔

روٹیشن پالیسی کے تحت سندھ پولیس کے 11 افسران کے تبادلوں کے معاملے پر وفاق اور وزیر اعلی سندھ سیّد مراد علی شاہ ایک مرتبہ پھر آمنے سامنے آ گئے ہیں، وزیراعلیٰ نے نیا حکم نامہ جاری کرتے ہوئے تمام ڈی آئی جیز اور پی اے ایس افسران کو چارج چھوڑنے سے روک دیا ہے۔

حکمنامہ میں کہا گیا ہے کہ افسران اگلے حکم تک اپنے عہدوں پر کام کرتے رہیں، وزیر اعلیٰ کے حکم پر عملدرآمد کیا جائے۔

یاد رہے کہ وفاق نے تمام افسران کو چارج چھوڑ کر رپورٹ کرنے کا تحریری حکم نامہ جاری کیا تھا۔

خیر پور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مراد علی شاہ نے کہا کہ وفاق سے کہا قانون کے مطابق ٹرانسفر، پوسٹنگ ہونی چاہئیں، مجھ سے کبھی وزیراعظم عمران خان نے صلاح مشورہ نہیں کیا، افسران کے تبادلوں کے معاملے پر ہم نے یہی کہا کہ قانون کی پیروی کریں۔ 2020ء میں قانون پاس ہوا تھا کہ مشاورت سے تبادلے ہونگے، وزیراعظم،وزیراعلیٰ کوافسران کے تبادلوں پرمشاورت کرنی چاہیے۔ کابینہ میں فیصلہ کیا ہے ہم پروپوزل دیں گے، چیف منسٹرکا اختیارہے ایک ماہ تک پروپوزل کا جواب دے گا۔ عمران خان کو کہنا چاہتے ہیں کہ افسران کے تبادلوں پر نظرثانی کریں۔