تازہ ترین
  • بریکنگ :- وزیراعظم عمران خان کی تقریرکابیشترحصہ مسئلہ کشمیرپرتھا،بیرسٹرسلطان
  • بریکنگ :- وزیراعظم نےواضح کہاوقت آگیاہےکشمیریوں کوان کاحق خودارادیت ملے،بیرسٹرسلطان
  • بریکنگ :- مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی ظلم اوربربریت جاری ہے،بیرسٹرسلطان
  • بریکنگ :- سیدعلی گیلانی کی وفات کےبعدبھارت کارویہ غیرانسانی تھا،بیرسٹرسلطان
  • بریکنگ :- سیدعلی گیلانی کی خواہش تھی ان کی تدفین شہداقبرستان میں کی جائے،بیرسٹرسلطان

ازخود بجلی بنانے اور مسوڑھے تندرست رکھنے والا مصنوعی دانت

Published On 14 September,2021 10:28 am

پنسلوانیا:(روزنامہ دنیا) جامعہ پنسلوانیہ میں سکول آف ڈینٹل میڈیسن سے وابستہ پروفیسر گیلسو ہوانگ اور ان کے ساتھیوں نے مصنوعی دانت بنایا ہے جو برش کرنے اور چبانے کے دوران خود اپنی بجلی بناتا ہے۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق دانت اس بجلی سے دو کام لیتا ہے یعنی دانت پرمیل کچیل کی تہہ نہیں جمتی اور دوم اطراف کے مسوڑھے تندرست رہتے ہیں۔اپنی بجلی کی بدولت مصنوعی دانت معمولی سی روشنی خارج کرتا رہتا ہے جو مسوڑھوں کی افزائش کے لیے بہت ضروری ہوتی ہے ۔

اس کی تفصیلات اے سی ایس اپلائیڈ مٹیریئلز اینڈ انٹرفیسس جرنل میں شائع ہوئی ہیں۔پروفیسرگیلسو کے مطابق فوٹوتھراپی دانتوں کے کئی مسائل حل کرسکتی ہے ۔مصنوعی دانت کی فوٹوتھراپی سے مسوڑھوں کو آرام ملے گا اور دیگر صحتمند مسوڑھوں کو کوئی نقصان نہیں ہوگا۔ مصنوعی دانت جس مسوڑھے میں بٹھایا جائے گا وہ فوٹوتھراپی سے اسی جگہ کو مضبوط بنائے گا۔