تازہ ترین
  • بریکنگ :- عدالت کاوفاقی حکومت کوٹی اوآرزبناکرعدالت میں پیش کرنےکاحکم
  • بریکنگ :- آئی جی اسلام آبادشیریں مزاری کوسیکیورٹی فراہم کریں،عدالت
  • بریکنگ :- اسلام آبادہائیکورٹ کےحکم پرشیریں مزاری کورہا کردیاگیا
  • بریکنگ :- شیریں مزاری کاموبائل فون ودیگرچیزیں انہیں واپس کردی گئیں
  • بریکنگ :- اسلام آباد:شیریں مزاری گرفتاری کیس،سماعت 25مئی تک ملتوی
  • بریکنگ :- اسلام آبادہائیکورٹ کامعاملےکی جوڈیشل انکوائری کاحکم

افغانستان سے فوج نکالنے کا مقصد چین پر نظر رکھنا ہے: امریکی وزیر خارجہ

Published On 19 April,2021 04:43 pm

نیو یارک : (ویب ڈیسک) افغانستان سے فوجی انخلاء کے اعلان کے بعد امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے کہا ہے کہ جنگ زدہ ملک نکالنے کا مقصد اب توجہ چین پر رکھنا ہے۔

غیر ملکی ٹی وی کو انٹرویو میں میں امریکی وزیرخارجہ نے کہا کہ جوبائیڈن انتظامیہ کا افغانستان سے فوج نکالنے کا مقصد چین پر اپنے وسائل کو خرچ کرنا ہے، یہ وقت ہے کہ افغانستان کے عوام خود آگے آئیں، دہشتگردی کا خطرہ اب افغانستان کے بجائے دوسری جگہوں پر منتقل ہوگیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ افغانستان میں خانہ جنگی کسی کے مفاد میں نہیں، اگر طالبان حکومت کا حصہ بننا اور اپنا اقتدار تسلیم کرواناچاہتے ہیں تو سیاسی عمل کا حصہ بننا ہوگا، ہمارا مقصد افغانستان میں 4 دہائیوں سے جاری کشیدگی کا حل ڈھونڈنا ہے، امریکا افغان فورسز کی ٹریننگ جاری رکھے گا، اب تک 3لاکھ فوجیوں کو ٹریننگ دی جا چکی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہماری ایجنڈا فہرست میں اب دیگر بہت سے اہم معاملات میں جن میں چین کے ساتھ تعلقات اور موسمیاتی تبدیلی سمیت کووڈ کی صورتحال ہے لہذا اب ہمیں اپنی طاقت اور وسائل کو یہاں خرچ کرنا ہوگا۔