تازہ ترین
  • بریکنگ :- کوئٹہ اورلسبیلہ کےعلاوہ بلوچستان کے 32اضلاع میں بلدیاتی الیکشن
  • بریکنگ :- پولنگ 8بجےسےشام 5بجےتک بغیرکسی وقفےکےجاری رہےگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:7 میونسپل کارپوریشن،838یونین کونسلزمیں پولنگ ہوگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:5ہزار345دیہی وارڈاور9ہزار14شہری وارڈکےلیےپولنگ ہوگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:35لاکھ52ہزار298ووٹرز اپنا حق رائے دہی استعمال کریں گے
  • بریکنگ :- کوئٹہ:20لاکھ 6ہزار274مرداور15لاکھ46ہزار124خواتین ووٹرزہیں
  • بریکنگ :- کوئٹہ:32اضلاع میں 5ہزار226پولنگ اسٹیشنزقائم
  • بریکنگ :- کوئٹہ:2ہزار54پولنگ اسٹیشنزانتہائی حساس،ایک ہزار974حساس قرار
  • بریکنگ :- الیکشن میں16 ہزار195امیدوارمدمقابل،102 امیدواربلامقابلہ منتخب
  • بریکنگ :- کوئٹہ:پولنگ اسٹیشنزپرپولیس،لیویزاورایف سی کےجوان تعینات

فلسطینی صدر نے اسرائیل کو مقبوضہ علاقے خالی کرنے کا الٹی میٹم دیدیا

Published On 25 September,2021 06:23 pm

نیویارک:(دنیا نیوز)فلسطینی صدر نے جنرل اسمبلی میں خطاب کے دوران اسرائیل کو مقبوضہ علاقے خالی کرنے کا الٹی میٹم دے دیا۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق فلسطین کے صدر محمود عباس نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے دبنگ انداز میں خطاب کرتے ہوئے اسرائیل کو مقبوضہ سرزمین خالی کرنے کا الٹی میٹم دیا۔

فلسطینی صدر نے اپنے خطاب کے دوران کہا کہ اسرائیل ایک سال کے اندر تمام مقبوضہ علاقوں سے افواج واپس نکالے ،اگر افواج نہیں نکالی تو فلسطینی اتھارٹی اسرائیل کو تسلیم کرنے کا فیصلہ واپس لے گی ۔

محمود عباس نے جنرل اسمبلی سے خطاب کرتے ہوئے مزید کہا کہ اسرائیل کی 1967 سے قبل کی سرحد بھی تسلیم نہیں کریں گے جبکہ انہوں نے مطالبہ کیا کہ یو این سیکرٹری جنرل عالمی امن کانفرنس بلائیں اور ایک سال کے اندر مسئلہ کو حل کریں ۔

فلسطینی صدر کا کہنا تھا کہ فلسطین مقبوضہ سرزمینوں کی قانونی حیثیت کے فیصلے کے لئے انٹرنیشل کریمنل کورٹ جانے کو تیار ہے۔

خیال رہے کہ اسرائیل نے مغربی کنارے ، مشرقی بیت المقدس اور غزہ پر 1967کی جنگ میں قبضہ کیا تھاجبکہ 1993 میں اوسلو معاہدے میں بعض فلسطینی حکام نے اسرائیل کو تسلیم کیا تھا۔