تازہ ترین
  • بریکنگ :- 23مارچ کومہنگائی مارچ ہوگا،مولانافضل الرحمان
  • بریکنگ :- اپوزیشن جماعتیں مارچ کوکامیاب بنائیں گی،مولانافضل الرحمان
  • بریکنگ :- ملک کےہرکونےسےعوام اسلام آبادآئیں گے،مولانافضل الرحمان
  • بریکنگ :- مارچ حکمرانوں کےخاتمےکےلیےآخری کیل ثابت ہوگا،فضل الرحمان
  • بریکنگ :- منی بجٹ سےمہنگائی دگنی ہوگئی ،مولانا فضل الرحمان
  • بریکنگ :- پی ڈی ایم نے منی بجٹ کومسترد کردیا،مولانافضل الرحمان
  • بریکنگ :- منی بجٹ واپس لیا جائے،مولانا فضل الرحمان کا مطالبہ
  • بریکنگ :- انہوں نےملکی معیشت کوکھلونابنادیا،مولانا فضل الرحمان
  • بریکنگ :- اسٹیٹ بینک کوعالمی مالیاتی اداروں کاغلام بنادیا گیا ،فضل الرحمان
  • بریکنگ :- مہنگائی نےعام آدمی کی کمرتوڑدی ،مولانافضل الرحمان
  • بریکنگ :- حکمرانوں کوعوام کی چیخیں سنائی نہیں دےرہیں،فضل الرحمان
  • بریکنگ :- ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل نےمصنوعی ایمانداری کا آئینہ دکھادیا،فضل الرحمان
  • بریکنگ :- ملکی تاریخ کی کرپٹ حکومت ثابت ہوئی،مولانافضل الرحمان
  • بریکنگ :- آئندہ الیکشن میں مشینوں کاسہارالینےکی کوشش ہورہی ہے،فضل الرحمان
  • بریکنگ :- فارن فنڈنگ کیس میں عمران خان مجرم قرارپائے،فضل الرحمان
  • بریکنگ :- عمران خان نے22 کےقریب اکاؤنٹس چھپائے،مولانا فضل الرحمان
  • بریکنگ :- 22اکاؤنٹس چھپانےوالےکوتحفظ دیا جارہا ہے،فضل الرحمان
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن پوری جماعت کوکالعدم قراردے،فضل الرحمان
  • بریکنگ :- ای وی ایم آرٹی ایس کا دوسرا نام ہے،مولانا فضل الرحمان

اومی کرون نے سعودی عرب کیلئے بھی خطرے کی گھنٹی بجادی

Published On 12 January,2022 11:10 pm

ریاض:(دنیا نیوز)اومی کرون وائرس کے تیزی سے پھیلاؤنے دنیا میں پھر خطرے کی گھنٹی بجادی ہے ، امریکا اور فرانس کے بعد سعودی عرب، جرمنی، آسٹریا اور بلغاریہ میں بھی ایک دن میں سب سے زیادہ کیسز منظرعام پر آنے کا ریکارڈ بن گیا ہے جبکہ چین نے شہر تیانجن میں 1کروڑ چالیس لاکھ شہریوں کی ٹیسٹنگ کا آغاز کردیا اور سویڈن نے بھی پابندیاں مزید سخت کردی ہیں۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق اومی کرون کی صورت میں کورونا پھر تیزی سے پھیلنے لگا، کئی ممالک میں مریضوں کی تعداد میں ریکارڈ اضافہ ہوگیا، سعودی عرب میں ایک روز میں 5 ہزار 362 نئے کیسز کی تصدیق کے بعد نیا ریکارڈ بن گیا ، اس سے قبل ایک روز میں سب سے زیادہ 4 ہزار 919 کیسز منظر عام پر آئے تھے ۔

جرمنی میں پہلی بار 24 گھنٹوں میں 80 ہزار سے زائد کیسز منظر عام پر آئے، آسٹریا میں 18 ہزار 427 اوربلغاریہ میں 7 ہزار سے زائد کیسز رپورٹ ہونے کے بعد نیا ریکارڈ قائم ہوگیا ہے ۔

اس سے قبل امریکا اور فرانس میں بھی کورونا کے یومیہ کیسز میں اضافے کا نیا ریکارڈ قائم ہوا تھا، چین نے تیانجن شہر میں 33 کورونا کیسز کے منظر عام پر آنے کے بعد ایک کروڑ چالیس لاکھ
شہریوں کی کورونا ٹیسٹنگ کا آغاز کردیا ، سویڈن نے اومیکرون وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے پابندیاں سخت کردیں اور انڈور تقریبات میں لوگوں کی تعداد محدود کردی گئی جبکہ ہوٹل اور ریسٹورنٹ رات گیارہ بجے بند ہونگے ۔

امریکی شہر لاس ویگاس میں تجارتی سمٹ میں شرکت کے بعد جنوبی کوریا کے 30 حکام کے کورونا ٹیسٹ مثبت آگئے۔

عالمی ادارہ صحت کا کہنا ہے کہ اومی کرون وائرس غیر ویکسین شدہ افراد کے لئے زیادہ خطرناک ہے البتہ اس کی شدت ڈیلٹا ویرینٹ کی نسبت کم ہے۔