تازہ ترین
  • بریکنگ :- افسران واٹس ایپ پرچلتے رہے،تحقیقات میں انکشاف
  • بریکنگ :- افسران صورتحال کو سمجھ نہیں سکے ،رپورٹ
  • بریکنگ :- افسران نےصورتحال کوسنجیدہ لیانہ کسی پلان پرعمل کیا ،رپورٹ
  • بریکنگ :- متعددافسران نے واٹس ایپ میسج تاخیر سے دیکھے ،رپورٹ
  • بریکنگ :- کمشنر، ڈی سی ،اے سی نےغفلت کا مظاہرہ کیا،رپورٹ
  • بریکنگ :- سی پی او،سی ٹی اوذمہ داریاں پوری کرنےمیں ناکام رہے،رپورٹ
  • بریکنگ :- محکمہ جنگلات اور ریسکیو 1122کا مقامی آفس بھی کچھ نہ کرسکا
  • بریکنگ :- محکمہ ہائی وے بھی ذمہ داری پوری کرنے میں ناکام رہا،رپورٹ
  • بریکنگ :- سانحہ مری کی رپورٹ 27 صفحات پر مشتمل ہے
  • بریکنگ :- 4 والیم پرمشتمل افسران اورمقامی لوگوں کے بیانات لیے گئے
  • بریکنگ :- تحقیقاتی کمیٹی کی مری میں محکمہ موسمیات کادفترقائم کرنےکی سفارش
  • بریکنگ :- مری کا ہل اسٹیشن تجاوزات کی وجہ سے گلیوں میں تبدیل ہوگیا،رپورٹ
  • بریکنگ :- غیر قانونی عمارتیں گرانےکی سفارش کی گئی ہے،رپورٹ
  • بریکنگ :- مشینری موجود تھی لیکن آدھا عملہ غائب تھا، رپورٹ
  • بریکنگ :- سانحہ مری ،متعلقہ محکموں کی غفلت ثابت

بھارتی خواب چکنا چور، پاکستان فروری 2020 ء‌ تک گرے لسٹ میں ہی رہے گا: فیٹف

Last Updated On 18 October,2019 08:12 pm

پیرس: (دنیا نیوز) پاکستان کو بلیک لسٹ کرانے کا بھارتی خواب چکنا چور ہوگیا، پاکستان فروری 2020ء تک گرے لسٹ میں ہی رہے گا۔

تفصیلات کے مطابق فنانشل ایکشن ٹاسک فورس نے بڑا فیصلہ سنا دیا ہے، پاکستان بلیک لسٹ نہیں ہوگا، کارکردگی بہتر قرار دیدی گئی۔ ذرائع کے مطابق تین ملکوں کی حمایت کے بعد پاکستان کو بلیک لسٹ کرانے کی بھارتی سازشیں چت ہو چکی ہیں۔

ذرائع وزارت خزانہ کے مطابق تین ملکوں کی حمایت کسی بھی ملک کو بلیک لسٹ سے بچا سکتی ہے۔ پاکستان کی چین، ترکی اور ملائیشیا نے بھرپور حمایت کی اور بھارت کی پاکستان کو بلیک لسٹ میں دھکیلنے کے عزائم خاک میں ملا دیے اور پاکستان وارننگ بھی نہیں دی۔

ذرائع کے مطابق بھارت بلیک لسٹ نہ کرنے پر پاکستان کو سخت وارننگ دینے کی کوششیں کر رہا تھا۔ پاکستان کو فروری تک مختلف اہداف کے حصول کا وقت مل گیا ہے۔ پاکستان فروری 2020ء تک گرے لسٹ میں ہی رہے گا۔ پاکستان کو معیشت دستاویزی بنانے کے لیے مختلف اہداف پر عمل کرنا ہوگا۔ وفاقی، صوبائی اور ضلعی سطح پر ٹرسٹ کی رجسٹریشن بہتر بنانا ہوگی۔زیورات، قیمتی پتھروں اور سناروں کے لین دین کو دستاویزی بنانا ہوگا جبکہ بینکوں میں پڑے بے نامی اکاؤنٹس کی مکمل چھان بین کرنا ہوگی۔

فنانشل ایکشن ٹاسک فورس اجلاس کے بعد وزارت خزانہ کی جانب سے جاری اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ ایف اے ٹی ایف اجلاس میں وزیر اقتصادی امور محمد حماد اظہر کی قیادت میں پاکستانی وفد نے شرکت کی۔ پاکستان نے یقین دہانی کرائی کہ ایف اے ٹی ایف کے ایکشن پلان پر عملدرآمد یقینی بنائیں گے۔

 

اعلامیہ کے مطابق ایف اے ٹی ایف نے ایکشن پلان پر عملدرآمد رپورٹ کا جائزہ لیا جبکہ اے پی جی اویلیوایشن رپورٹ بھی زیر غور آئی۔ ایف اے ٹی ایف نے فیصلہ کیا ہے کہ پاکستان بدستور گرے لسٹ میں رہے گا۔ پاکستان کی اے پی جی کے حوالے سے مزید 12 ماہ تک کارکردگی دیکھی جائے گی۔