تازہ ترین
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں 24 گھنٹےکےدوران کوروناسےمزید 17 اموات
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں کوروناسےجاں بحق افرادکی تعداد 28 ہزار 269 ہوگئی
  • بریکنگ :- 24 گھنٹےکےدوران 44 ہزار 831 کوروناٹیسٹ کیےگئے،این سی اوسی
  • بریکنگ :- 24 گھنٹےمیں کوروناکےمزید 720 کیس رپورٹ،این سی اوسی
  • بریکنگ :- ملک میں کورونامثبت کیسزکی شرح 1.60 فیصدرہی،این سی اوسی

اسلام آباد سمیت دیگر شہروں میں اسمارٹ لاک ڈاؤن کا دائرہ وسیع، مزید علاقے شامل

Last Updated On 22 June,2020 01:25 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) کورونا کا پھیلاؤ روکنے کیلئے اقدامات کا سلسلہ جاری ہے، اسلام آباد میں غوری ٹاؤن کے سات فیز سیل کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا، ملک کے بیشتر شہروں میں بھی اسمارٹ لاک ڈاؤن کے تحت علاقے بند ہیں جہاں پولیس اور رینجرز تعینات ہے۔

کورونا کو بڑھنے سے روکنے کا مشن، شہر شہر اسمارٹ لاک ڈاؤن کے تحت مزید علاقے سیل کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ اسلام آباد میں غوری ٹاؤن کے 7فیز کو سیل کیا جائے گا۔ ضلعی انتظامیہ کے مطابق کورونا کیسز میں تشویشناک حد تک اضافے کے بعد لاک ڈاؤن کا فیصلہ کیا۔ اسلام آباد میں آئی ایٹ، آئی ٹین ، جی نائن اور کراچی کمپنی کے علاقے پہلے ہی سیل ہیں۔

ملتان میںہاٹ اسپاٹ علاقے ایم ڈی اے چوک، نیو ملتان اور شاہ رکن عالم سیل ہیں جہاں رینجرز اور پولیس تعینات ہے۔ انتظامیہ نے اب وہاڑی روڈ اور سوئی گیس کالونی میں بھی اسمارٹ لاک ڈاؤن کا فیصلہ کیا ہے۔ مردان میں منگل سے چار علاقوں کو سیل کرنے کا پروگرام ہے جس کیلئے انتظامیہ نے تیاری شروع کر دی ہے۔ اس موقع پر شہر میں آمدورفت مکمل طور پر بند ہو گی۔

میرپورخاص میں بھی کورونا کا پھیلاؤ روکنے کیلئے 3 علاقوں کو سیل کیا گیا ہے۔ لوگوں کو ضروری اشیاء لینے کے علاوہ عام افراد کی داخلے پر مکمل پابندی عائد ہو گی۔ ٹی ٹی کی حکمت عملی کی بنیاد پر اسلام آباد، آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان سمیت تمام صوبوں میں 549 علاقوں میں لاک ڈاؤن ہے۔

پنجاب میں 20 لاکھ آبادی والے علاقوں میں 183مقامات پر لاک ڈاؤن کیا گیا۔ سندھ میں 49 لاکھ سے زائد آبادی والے علاقوں میں 68 علاقے سیل کئے گئے۔ خیبرپختونخوا میں 5 لاکھ سے زائد آبادی والے علاقوں میں 240 مقامات بند ہیں۔ آزاد کشمیرمیں 40، اسلام آباد میں 10 اور گلگت بلتستان میں 16علاقوں میں لاک ڈاؤن کیا گیا۔