تازہ ترین
  • بریکنگ :- کراچی:جوہرآبادمیں حجام کی دکان پرڈکیتی مزاحمت پرفائرنگ
  • بریکنگ :- کراچی:ایک شخص جاں بحق،پولیس اہلکارسمیت 2افرادزخمی
  • بریکنگ :- کراچی:مقتول کی شناخت محمدسلمان کےنام سےکرلی گئی،پولیس
  • بریکنگ :- زخمی اہلکارسعداورشمس کوعباسی شہیداسپتال منتقل کردیاگیا،پولیس
  • بریکنگ :- ڈکیتی کےبعدڈاکوفرارہونےلگےتوسادہ لباس میں موجوداہلکارنےفائرنگ کی
  • بریکنگ :- واٹرپلانٹ کےقریب کھڑاشخص سینےپرگولی لگنےسےجاں بحق ہوگیا
  • بریکنگ :- زخمی اہلکارسعدرؤف خواجہ اجمیرنگری تھانےمیں تعینات ہے،پولیس

منیر اکرم کا یو این سیکریٹری جنرل کو پاکستان میں بھارتی دہشتگردی سے متعلق ڈوزئیر پیش

Published On 25 November,2020 08:43 am

اسلام آباد: (دنیا نیوز) پاکستان بھارتی ریاستی دہشتگردی کو اقوام عالم کے سامنے لے آیا، پاکستان کے مستقل مندوب منیر اکرم نے یو این سیکریٹری جنرل کو ڈوزئیر پیش کر دیا۔ انتونیو گو ترس نے رپورٹ کا بغور جائزہ لینے کی یقین دہانی کرا دی۔

اقوامِ متحدہ میں پاکستان کے مستقل مندوب سفیر منیر اکرم نے انتونیو گوترس سے ملاقات کی اور یو این سیکریٹری جنرل کو پاکستان کی جانب سے ہندوستان کے خلاف ڈوزئیر پیش کیے۔ اس موقع پر منیر اکرم نے موقف اختیار کیا کہ بھارت ایل او سی پر فائر بندی معاہدے کی خلاف ورزی، پاکستان میں دہشت گردی کرانے اور سی پیک کو سبوتاژ کرنے کی کوشش کر رہا ہے، بھارتی دہشتگردی یو این چارٹر کی کھلی خلاف ورزی ہے، پاکستان کسی بھی جارحیت کی صورت میں دفاع کا حق رکھتا ہے۔

منیر اکرم کا کہنا تھا کہ بھارت کے دہشتگردوں کی پشت پناہی کرنے کے ٹھوس شواہد پر مشتمل ڈوزئیر بھی پیش کر چکے ہیں، مقبوضہ جموں و کشمیر کے حوالے سے او آئی سی کی بہت سی قراردادیں موجود ہیں، انہیں کشمیر کی تازہ صورتحال سے آگاہ کرنا میرے فرائض میں شامل ہے۔

دوسری جانب وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے او آئی کونسل آف فارن منسٹرز میں شرکت کے حوالے سے ویڈیو پیغام میں کہا کہ وزرائے خارجہ اجلاس میں پاکستان کے نکتہ نظر کو پیش کرنے کا موقع ملے گا، مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی جانب سے انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کا سلسلہ بڑھ گیا، مقبوضہ کشمیر میں جاری ظلم و بربریت کے حوالے سے آواز اٹھانے کیلئے یہ ایک مناسب فورم ہے۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ او آئی سی کے انسانی حقوق کمیشن کا شکر گزار ہوں، مقبوضہ کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں پر ان کا بہت واضح موقف سامنے آتا رہا ہے۔