تازہ ترین
  • بریکنگ :- حکومتی مشینری مسائل حل نہیں کرےگی توہم کریں گے،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- سابق بلدیاتی نمائندےعوامی مسائل کےحل کیلئےکوششیں تیزکردیں،خالدمقبول
  • بریکنگ :- جولوگ حکومتی بنچزپربیٹھناچاہتےہیں وہ ایم کیوایم سےامیدلگائےبیٹھےہیں،خالدمقبول
  • بریکنگ :- کراچی:ہمیں لیڈرنہیں کارکن چاہئیں،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- جسےایم کیوایم میں آناہےبغیرکسی شرط کےآئے،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- کراچی:ہم کسی کےآلہ کارنہیں بنیں گے،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- جس دن حجت تمام ہوئی ہم حکومت ہی نہیں ایوان بھی چھوڑدیں گے،خالدمقبول
  • بریکنگ :- ایم کیوایم کاہروہ کارکن لیڈرہےجواحساس ذمہ داری رکھتاہے،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- حکومت نےعوامی مسائل حل نہیں کیےتوہم شیڈوکیبنٹ بنائیں گے،خالدمقبول

سندھ حکومت نے سکولز تاحکم ثانی بند رکھنے کا اعلان کر دیا

Published On 21 August,2021 10:31 pm

کراچی: (دنیا نیوز) سندھ حکومت نے اپنے فیصلے پر یوٹرن لے لیا، سکولز 30 اگست سے نہیں کھلیں گے۔

سندھ میں کورونا وائرس کی صورتحال کے بعد سندھ حکومت نے اور حکمنامہ جاری کر دیا ہے، محکمہ تعلیم سندھ نے سکولز تاحکم ثانی بند رکھنے کا اعلان کر دیا ہے۔ سکولز تاحکم ثانی بند کرنے کا نوٹیفیکیشن بھی جاری کر دیا گیا ہے۔

محکمہ تعلیم سندھ کی طرف سے بتایا گیا ہے کہ سندھ میں سکولز 30 اگست سےنہیں کھلیں گے، سکولز کھولنے کا فیصلہ بعد میں کیا جائے گا،

واضح رہے کہ سندھ میں عالمی وبا کی چوتھی لہر بالخصوص ڈیلٹا قسم کے بڑھتے ہوئے کیسز کے پیشِ نظر 26 جولائی سے تمام تعلیمی ادارے بند کرنے تاہم امتحانات شیڈول کے مطابق ہونے کا اعلان کیا گیا تھا۔ بعدازاں کورونا کیسز میں اضافے کے بعد سندھ میں یکم اگست سے 8 اگست تک سخت لاک ڈاؤن بھی لگایا گیا تھا تاہم اس میں توسیع نہیں کی گئی تھی۔ محکمہ تعلیم سندھ نے اپنے ماتحت تمام سرکاری و نجی تعلیمی ادارے 19 اگست تک بند رکھنے کا اعلان کیا تھا۔

وزیر تعلیم سندھ نے اعلان کیا تھا کہ سکولوں کو کھولنے کے لیے 20 اگست کی تاریخ مقرر کی گئی ہے اور 7 یا 8 محرم کو صورتحال کا جائزہ لینے کے لیے اجلاس بلایا جائے گا۔ بعد ازاں 17 اگست کو اسٹیئرنگ کمیٹی کے اجلاس کے بعد وزیر تعلیم سندھ سید سردار شاہ نے 23 اگست سے صوبے میں اسکولز کھولنے کا اعلان کیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں: سندھ حکومت کا سکول مزید ایک ہفتہ نہ کھولنے کا اعلان

گزشتہ روز وزیراعلیٰ سندھ نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتایا تھا کہ سندھ میں تعلیمی ادارے مزید ایک ہفتے نہیں کھولیں گے، تعلیمی ادارے 30 اگست سے کھولنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ایک ہفتے میں والدین، اساتذہ، سٹاف ویکسین لگائیں۔

 

دوسری طرف کورونا وائرس سے 65 افراد جاں بحق ہوگئے، جس کے بعد اموات کی تعداد 24 ہزار 848 ہوگئی۔ پاکستان میں کورونا کے تصدیق شدہ کیسز کی تعداد 11 لاکھ 19 ہزار 970 ہوگئی۔

 

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 3 ہزار 84 نئے کیسز رپورٹ ہوئے، پنجاب میں 3 لاکھ 78 ہزار 288، سندھ میں 4 لاکھ 18 ہزار 478، خیبر پختونخوا میں ایک لاکھ 55 ہزار 712، بلوچستان میں 31 ہزار 781، گلگت بلتستان میں 9 ہزار 579، اسلام آباد میں 95 ہزار 709 جبکہ آزاد کشمیر میں 30 ہزار 423 کیسز رپورٹ ہوئے۔

ملک بھر میں اب تک ایک کروڑ 71 لاکھ 69 ہزار 42 افراد کے ٹیسٹ کئے گئے، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 53 ہزار 770 نئے ٹیسٹ کئے گئے، اب تک 10 لاکھ 6 ہزار 78 مریض صحتیاب ہوچکے ہیں جبکہ 5 ہزار 151 مریضوں کی حالت تشویشناک ہے۔

پاکستان میں کورونا سے ایک دن میں 65 افراد جاں بحق ہوئے جس کے بعد وائرس سے مرنے والوں کی تعداد 24 ہزار 848 ہوگئی۔ پنجاب میں 11 ہزار 505، سندھ میں 6 ہزار 566، خیبرپختونخوا میں 4 ہزار 750، اسلام آباد میں 848، بلوچستان میں 335، گلگت بلتستان میں 169 اور آزاد کشمیر میں 675 مریض جان سے ہاتھ دھو بیٹھے۔