تازہ ترین
  • بریکنگ :- 24 گھنٹےمیں کوروناکےمزید567 کیس رپورٹ،این سی اوسی
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں کورونامریضوں کی تعداد 12 لاکھ 67 ہزار 393 ہوگئی
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں 24 گھنٹےکےدوران کوروناسےمزید 16 اموات
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں کوروناسےجاں بحق افرادکی تعداد 28 ہزار 344 ہوگئی
  • بریکنگ :- 24 گھنٹےکےدوران 39 ہزار 200 کوروناٹیسٹ کیےگئے،این سی اوسی
  • بریکنگ :- کوروناسےمتاثر1704 مریضوں کی حالت تشویشناک،این سی اوسی
  • بریکنگ :- ملک میں کورونامثبت کیسزکی شرح 1.44 فیصدرہی،این سی اوسی

دسویں اور بارہویں کلاس کے تمام طلبا کو پاس کرنے کا فیصلہ

Published On 13 September,2021 07:07 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) وفاقی حکومت نے دسویں اور بارہویں کلاس کے تمام طلبا کو پاس کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔

وفاقی وزارت تعلیم نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر بیان میں کہا کہ وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کے زیر صدارت بین الصوبائی وزرائے تعلیم کانفرنس کا اجلاس ہوا جہاں کورونا کی صورت حال، نئے تعلیمی سال کا آغاز، سیکنڈری اور ہائر سیکنڈری کے سال میں دو امتحانات، خیبر پختونخوا اور پنجاب میں یکساں قومی نصاب کے نفاذ اور پروموشن پالیسی پر غور کیا گیا۔

وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے ٹوئٹر پر کہا کہ بین الصوبائی وزرائے تعلیم اجلاس میں فیصلہ ہو ا کہ لازمی مضامین کے نمبر اختیاری مضامین کے اوسط نمبروں پر دئے جائیں گے تاہم جو طلبہ فیل ہوں گے انہیں 33فیصد نمبر دیے جائیں گے تا کہ ان کے نمبروں سے اوسط نکالی جا سکے۔

انہوں نے کہا کہ بین الصوبائی وزرائے تعلیم کانفرنس میں فیصلہ کیا گیا کہ بورڈ کے امتحانات مئی اور جون میں ہوں گے اور اگلا تعلیمی سال 22 اگست سے شروع ہوگا۔ او اور اے لیول کے امتحانات شیڈول کے مطابق ہوں گے جبکہ جامعات امتحانات کے لیے اپنا ٹائم ٹیبل خود بنائیں گی۔ وزرائے تعلیم نے فیصلہ کیا کہ تمام کلاسز کا نصاب اپریل اور مئی تک مکمل کرنے کے امر کو یقینی بنایا جائے گا تاکہ منتخب نصاب کے بجائے مکمل نصاب سے امتحانات لیے جائیں۔

انہوں نے کہا کہ وزرائے تعلیم کا خیال تھا کہ تعلیم کے شعبے میں وسیع پیمانے پر ویکسینیشن کے بعد تعلیمی اداروں کو جلد کھول دینا چاہیے تاکہ بچوں کے تعلیمی نقصان کم سے کم کیا جا سکے۔ اس ضمن میں این سی او سی کے سامنے تجویز رکھی جائے گی۔