تازہ ترین
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن نے 150 ارکان پارلیمنٹ کی رکنیت معطل کردی
  • بریکنگ :- اسلام آباد: رکنیت گوشوارے جمع نہ کرانے پر معطل کی گئی
  • بریکنگ :- قومی اسمبلی 36،سینیٹ 3،پنجاب اسمبلی کے 69 ارکان کی رکنیت معطل
  • بریکنگ :- سندھ اسمبلی 14،خیبرپختونخوا اسمبلی کے 21 ارکان کی رکنیت معطل
  • بریکنگ :- بلوچستان اسمبلی کے 7 ارکان کی رکنیت بھی معطل کردی گئی
  • بریکنگ :- نورالحق قادری،فرخ حبیب،حماداظہر،شفقت محمودکی رکنیت معطل
  • بریکنگ :- فہمیدہ مرزا،عامرلیاقت،راجہ ریاض،صداقت عباسی،خالدمقبول صدیقی شامل
  • بریکنگ :- رکن پنجاب اسمبلی اویس لغاری کی رکنیت معطل
  • بریکنگ :- الیکشن کمیشن نےیارمحمدرندکی رکنیت معطل کردی
  • بریکنگ :- معطل ارکان اسمبلی وسینیٹ اجلاسوں میں شرکت نہیں کرسکیں گے،الیکشن کمیشن
  • بریکنگ :- معطل ارکان کسی بھی قانون سازی میں شریک نہیں ہوں گے،الیکشن کمیشن

اسموگ کی شدت میں کمی: لاہور کا ائیر کوالٹی انڈیکس کم ہو کر 231 پر آگیا

Published On 24 November,2021 09:11 am

لاہور: (دنیا نیوز) فضائی آلودگی سے نمٹنے کیلئے اقدامات کا مثبت نتیجہ، اسموگ کی شدت میں کمی، لاہور کا ائیر کوالٹی انڈیکس کم ہو کر 231 پر آگیا، فیصل آباد، کراچی سمیت دیگر شہروں میں بھی فضائی آلودگی کی صورتحال بہتر ہے۔

کوٹ لکھپت میں سب سے زیادہ اے کیو آئی 387 ریکارڈ کیا گیا۔ فتح گڑھ میں 319، بحریہ آرچرڈ میں 303، گلبرک میں 293، ماڈل ٹاون میں 270 جبکہ ڈی ایچ اے 8 میں آلودگی کی شرح 269 ریکارڈ کی گئی۔ ٹاون شپ میں 265 اور ٹھوکر نیاز بیگ میں ایئر کوالٹی انڈیکس 261 ریکارڈ کیا گیا۔

ایئر کوالٹی انڈیکس کی درجہ بندی کے مطابق 151 سے 200 درجے تک آلودگی مضرِ صحت، 201 سے 300 درجے تک آلودگی انتہائی مضرِ صحت اور 301 سے زائد درجہ خطرناک آلودگی کو ظاہر کرتا ہے۔