تازہ ترین
  • بریکنگ :- امام حسینؓ کی عظیم قربانی تاریخ عالم کادرخشاں باب ہے،وزیراعلیٰ پنجاب
  • بریکنگ :- شہداکی قربانی رہتی دنیاتک مظلوم قوموں کوحوصلہ دیتی رہےگی،پرویزالہٰی
  • بریکنگ :- شہدائےکربلاکی لازوال قربانیاں سب کیلئےمشعل راہ ہیں،وزیراعلیٰ پنجاب
  • بریکنگ :- یوم عاشورہمیں حق کی راہ میں عزیزترین رشتوں کی قربانی کادرس دیتاہے،فیاض چوہان
  • بریکنگ :- امام حسینؓ نےیزیدسےٹکراقتدارکیلئےنہیں لی تھی،فیاض الحسن چوہان
  • بریکنگ :- عظیم ترین قربانی حق وباطل کافرق واضح کرنےکیلئےتھی،فیاض چوہان
  • بریکنگ :- یوم عاشورامام حسینؓ کی لازوال قربانی اورشہادت کادن ہے،حمزہ شہباز
  • بریکنگ :- نواسہ رسولؐ کی شہادت تاریخ اسلام کاالمناک ترین باب ہے،حمزہ شہباز
  • بریکنگ :- ظالمانہ حکومت کیخلاف صدائےاحتجاج شہادت امام کادرس ہے،حمزہ شہباز
  • بریکنگ :- کربلامیں امام حسینؓ اوران کارفقانےجرات کی تاریخ رقم کی،حمزہ شہباز
  • بریکنگ :- یوم عاشورشہدائےکربلاکی عظیم قربانیوں کی یاددلاتاہے،ہاشم ڈوگر
  • بریکنگ :- یوم عاشوربھائی چارےاورامن واتحادکاپیکرہے،وزیرداخلہ پنجاب
  • بریکنگ :- واقعہ کربلاظلم کیخلاف ڈٹ جانےکاسبق دیتاہے،وزیرداخلہ پنجاب
  • بریکنگ :- واقعہ کربلاامت مسلمہ کیلئےمشعل راہ ہے،وزیرداخلہ پنجاب

غیر ملکی سازش کے کوئی ثبوت نہیں ملے، اعلامیہ قومی سلامتی کمیٹی

Published On 22 April,2022 05:10 pm

اسلام آباد:(دنیا نیوز) وزیراعظم شہباز شریف کی زیر صدارت قومی سلامتی کمیٹی اجلاس کے اعلامیہ کے مطابق ایجنسیوں نے بریفنگ دی کہ غیر ملکی سازش سے متعلق کوئی ثبوت نہیں ملا جبکہ قومی سلامتی کمیٹی نے گذشتہ اعلامیے کی بھی توثیق کر دی۔

وزیراعظم شہباز شریف کی زیر صدارت ہونے والے قومی سلامتی کمیٹی کے اجلاس کا علامیہ جاری کردیا گیا ہے، اعلامیہ کے مطابق اجلاس میں چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی اور تینوں سروسز چیفس، دفاع، خارجہ، داخلہ، اطلاعات کے وزراء نے شرکت کی۔

اعلامیہ کے مطابق اجلاس میں واشنگٹن سے پاکستانی سفارتخانے کے مراسلے کا جائزہ لیا گیا، امریکہ میں پاکستان کے سابق سفیر اسد مجید نے اجلاس میں شرکت کی، اسد مجید نے اجلاس کو ٹیلی گرام کے مواد اور پس منظر پر بریفنگ دی۔

اجلاس کے جاری کردہ اعلامیہ کے مطابق گزشتہ قومی سلامتی کمیٹی اجلاس کے منٹس کی توثیق کی گئی، ٹیلی گرام میں کسی سازش کے ثبوت نہیں ملے، سکیورٹی ایجنسیز نے قومی سلامتی کمیٹی کو سازش کے ثبوت نہ ملنے سے آگاہ کر دیا، سکیورٹی ایجنسیز کی معلومات کے مطابق کوئی بیرونی سازش نہیں ہوئی۔

اعلامیہ کے مطابق واشنگٹن میں پاکستانی سفارتخانے کو ٹیلی گرام موصول ہوا، خفیہ اداروں نے مراسلے کی تحقیقات کیں، مرکزی سکیورٹی ایجنسی کے مطابق کوئی بین الاقوامی سازش نہیں ہوئی، دوران تحقیقات غیر ملکی سازش کے کوئی ثبوت نہیں ملے۔