تازہ ترین
  • بریکنگ :- 24 گھنٹےمیں کوروناکےمزید567 کیس رپورٹ،این سی اوسی
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں کورونامریضوں کی تعداد 12 لاکھ 67 ہزار 393 ہوگئی
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں 24 گھنٹےکےدوران کوروناسےمزید 16 اموات
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں کوروناسےجاں بحق افرادکی تعداد 28 ہزار 344 ہوگئی
  • بریکنگ :- 24 گھنٹےکےدوران 39 ہزار 200 کوروناٹیسٹ کیےگئے،این سی اوسی
  • بریکنگ :- کوروناسےمتاثر1704 مریضوں کی حالت تشویشناک،این سی اوسی
  • بریکنگ :- ملک میں کورونامثبت کیسزکی شرح 1.44 فیصدرہی،این سی اوسی

پاک نیوزی لینڈ کرکٹ سیریز منسوخ، غیر ملکی کرکٹرز بھی مایوس

Published On 17 September,2021 04:44 pm

لاہور: (ویب ڈیسک) پاکستان اور نیوزی لینڈ کی کرکٹ سیریز منسوخ ہونے کے بعد غیر ملکی کرکٹرز نے بھی مایوسی کا اظہار کیا ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ڈیرن سیمی کا کہنا تھا کہ سکیورٹی ایشو کو وجہ بنا کر نیوزی لینڈ اور پاکستان کی سیریز کو منسوخ کر دینا قابل افسوس ہے۔ پچھلے 6 سالوں سے پاکستان کا کھیلنا اور دورہ کرنا انتہائی خوشگوار تجربات میں سے ایک رہا ہے۔

 

انہوں نے اپنی بات کو جاری رکھتے ہوئے کہا کہ میں نے ہمیشہ پاکستان میں اپنے آپ کو محفوظ ہمیشہ محسوس کیا ہے، یہ پاکستان کے لیے بہت بڑا دھچکا ہے۔ 

پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) میں پشاور زلمی کی نمائندگی کرنے والے ردرفورڈ کا کہنا تھا کہ پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان کرکٹ سیریز کی منسوخی کرکٹ سے محبت کرنے والوں کے لیے اچھی خبر نہیں ہے۔ میں نے بہت سے ممالک میں سفر کیا ہے، پاکستان کرکٹ کے حوالے سے محفوظ ترین ملک ہے اور کرکٹ سے پیار کرنے والا ملک ہے۔

 سری لنکن کرکٹر اینجلو پریرا نے بھی پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان کرکٹ سیریز کی منسوخی پر رد عمل دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان ایک محفوظ ملک ہے۔