جنوبی افریقہ سے بدترین شکست پر سابق انگلش کپتان ناصرحسین ٹیم پر برس پڑے

Published On 22 October,2023 10:58 am

لاہور: (ویب ڈیسک) جنوبی افریقہ سے 229 رنز سے شکست پر انگلینڈ کے سابق کپتان ناصر حسین ٹیم پر برس پڑے۔

گزشتہ روز ہونیوالے ورلڈ کپ کے میچ میں جنوبی افریقہ نے 400 رنز کا ہدف دیا جس کے بعد پوری انگلش ٹیم محض 170 رنز پر ڈھیر ہوگئی۔

اس حوالے سے سابق انگلش کپتان ناصر حسین نے غصے کا اظہار کیا اور شکست پر ٹیم کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ انگلینڈ ٹیم غلط فیصلے کر رہی ہے، ٹاس جیت کر باؤلنگ کا فیصلہ درست نہیں تھا، ٹیم میں تین تبدیلیاں بھی غلط تھیں۔

انہوں نے کہا کہ کرس ووکس کا فلیٹ پچز پر ردہم نہیں، بین اسٹوکس کو ان کی جگہ لانا ٹھیک تھا لیکن باقی تبدیلیاں کیوں کی گئیں؟ ان تبدیلیوں نے سب کچھ بدل کر رکھ دیا، اعداد و شمار کی بنیاد پر ٹاس جیت کر باؤلنگ کرنا درست نہیں تھا۔

ناصر حسین کا کہنا تھا کہ انگلینڈ اور ساؤتھ افریقہ کی ٹیمیں پچھلے میچز میں ہدف کے تعاقب میں ناکام رہیں، ڈیوڈ ویلی کو کریمپس پڑ گئے، بین اسٹوکس بھی مشکل میں نظر آئے، ٹاپلی اور جو روٹ ٹریٹمنٹ کراتے رہے، اس کے علاوہ عادل رشید بخار محسوس کر رہے تھے، یہ سب ایک ڈراؤنا خواب تھا۔

انہوں نے کہا کہ انگلینڈ ایک ایسی ٹیم لگ رہی ہے جس میں اعتماد نہیں، تین شکستوں سے انہیں افسوس اور نقصان رہے گا، انگلینڈ نے ایک برانڈ کی کرکٹ کھیلی اب کیسے باؤنس بیک کرے گی؟

 

Advertisement