تازہ ترین
  • بریکنگ :- ان کےپاس چین کاانیل کپور ہے،پی ٹی آئی رہنمادعابھٹو
  • بریکنگ :- کراچی:اسپیکرنےدعابھٹوکامائیک بندکردیا
  • بریکنگ :- سندھ اسمبلی،اپوزیشن ارکان نےاسپیکرڈائس کاگھیراؤکرلیا
  • بریکنگ :- اسپیکرصاحب !ان بکریوں کوچپ کرائیں،پی ٹی آئی رہنمادعابھٹو
  • بریکنگ :- لاڑکانہ میں میت کیلئےایمبولینس دستیاب نہیں،دعابھٹو
  • بریکنگ :- کراچی:تھر کے بچےبھوک سے مررہےہیں،دعابھٹو

عامر لیاقت کی تیسری شادی کی افواہیں، لڑکی کے والد نے نکاح کی تردید کر دی

Published On 06 May,2021 04:36 pm

لاہور: (ویب ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے کراچی سے رکن قومی اسمبلی عامر لیاقت کی مبینہ تیسری بیوی ہانیہ خان کے والد نے بیٹی اور عامر لیاقت کے نکاح کی تردید کردی۔

واضح رہے کہ کچھ روز قبل ہانیہ خان نامی خاتون جو خود کو اداکارہ اور ماڈل بتاتی ہے نے دعویٰ کیاتھا کہ وہ عامر لیاقت کی تیسری بیوی ہے۔

پی ٹی آئی کے رکن عامر لیاقت حسین نے انسٹاگرام اکاؤنٹ پر ہانیہ خان نامی اداکارہ کے ساتھ تیسری شادی کے حوالے سے ویڈیوز اور وضاحتی پیغام جاری کیا ہے۔ ویڈیو میں ایک شخص عامر لیاقت کے گلے لگا ہوا ہے۔

عامر لیاقت کا کہنا ہے کہ یہ ہانیہ خان کے والد ہیں اور انہوں نے ان سے معافی مانگی ہے۔

دوسری ویڈیو میں ہانیہ خان کے والد نے اپنے پیغام میں بیٹی اور عامر لیاقت کے مبینہ تیسرے نکاح کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ میری بیٹی اور عامر لیاقت کا کوئی نکاح نہیں ہوا۔ ہمارے گھر عامر لیاقت آئے تھے اور انہوں نے ہماری مدد کی تھی اور واپس چلے گئے تھے۔

ہانیہ کے والد نے کہا کہ میری بیٹی ڈپریشن کا شکار ہے وہ کراچی آئی تھی اور میں اسے واپس اپنے ساتھ لے کر جارہا ہوں۔ گزارش ہے کوئی بھی ایسی بات نہ کرے جس سے رکن قومی اسمبلی کے نام پر حرف آئے۔ میری بیٹی نے جو بھی عامر لیاقت کے ساتھ کیا اس کی طرف سے میں عامر لیاقت سے معذرت چاہتا ہوں۔ کوئی نکاح نہیں ہوا کیونکہ اگر نکاح ہوا ہوتا تو ماں باپ کو تو پتہ ہوتا۔

ویڈیو کے ساتھ عامر لیاقت نے ایک لمبا چوڑا پیغام بھی لکھا ہے جس میں انہوں نے ہانیہ خان کو مخبوط الحواس، ذہنی بیمار اور تصورات میں گھری رہنے والی لڑکی قرار دیتے ہوئے کہا کہ ان الزامات کی وجہ سے ان کا خاندانی نظام دہل کر گیا۔

عامر لیاقت نے اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ ہاں میرا قصور یہ تھا کہ میں نے ان کے گھر کی مدد کی جس طرح 921 خاندانوں کی گزشتہ کئی برسوں سے مدد ہورہی ہے، باپ نے کہا میری بیٹی نیم پاگل ہے آپ اس کی باتوں کا برا نہ مانیے گا۔

انہوں نے کہا کہ ہمارے لیے تو اعزاز ہے کہ آپ ایک ٹیکسی ڈرائیور کے گھر مدد کرنے کو آگئے اور پھر مجھ پر کہرام ٹوٹ پڑا باپ کےکہنے پر اسے دلاسے دیے کہ اچھا تم نے اگر تصورات میں کوئی چیز سوچ لی ہے تو وہ ذہن سے نکال دو یہ ممکن نہیں لیکن پہلے اس نے تصور میں نکاح کیا پھر خود ہی میڈیا میں رہنے کے سبب گواہ گھڑ لیے۔