تازہ ترین
  • بریکنگ :- آکٹرائے اور موٹر وہیکل ٹیکس میں سےبھی بلدیہ کراچی کو حصہ ملے گا،ناصر حسین شاہ
  • بریکنگ :- کراچی: مئیر کراچی واٹر بورڈ کے چیئرمین ہوں گے،ناصر حسین شاہ
  • بریکنگ :- بلدیہ کو خود مختار بنانے کیلئےمالی وسائل دینےپر سندھ حکومت تیار، ناصر حسین
  • بریکنگ :- کراچی: بلدیاتی قانون پر جماعت اسلامی اور سندھ حکومت کے مذاکرات کامیاب
  • بریکنگ :- سندھ حکومت اور جماعت اسلامی کےدرمیان تحریری معاہدہ
  • بریکنگ :- جماعت اسلامی کا دھرنا ختم کرنے کا اعلان،کارکنان گھروں کو روانہ
  • بریکنگ :- کراچی: آج کے اعلان کیے گئے دھرنے بھی ختم کر دیئے ہیں،حافظ نعیم الرحمان
  • بریکنگ :- آپ کو تاریخی جدوجہد کرنے پرمبارکباد پیش کرتا ہوں،حافظ نعیم الرحمان
  • بریکنگ :- آپ نے ساڑھے تین کروڑ عوام ہی نہیں پورے ملک کو حیران کردیا،حافظ نعیم
  • بریکنگ :- ہم استقامت کے ساتھ 29 دن دھرنے پر بیٹھے رہے،حافظ نعیم الرحمان
  • بریکنگ :- کراچی:سندھ حکومت اور جماعت اسلامی نے مل کر ایک مسودہ بنایا ہے،حافظ نعیم الرحمان
  • بریکنگ :- کراچی:2021 کا ترمیمی بل اب ختم ہو جائےگا،حافظ نعیم الرحمان
  • بریکنگ :- آج میڈیا کے سامنے وزیر بلدیات نے ہمارے مطالبات تسلیم کیے،حافظ نعیم الرحمان
  • بریکنگ :- ہم اس معاہدے پر عمل بھی کروائیں گے،حافظ نعیم الرحمان
  • بریکنگ :- کراچی:صوبائی فنانس کمیشن کے قیام پر رضامندہیں،ناصر حسین شاہ
  • بریکنگ :- مئیر اور ٹاؤن چیئرمین کمیشن کے ممبر ہوں گے،ناصر حسین شاہ
  • بریکنگ :- سندھ حکومت تعلیمی ادارے اور اسپتال بلدیہ کو واپس کرنے پر تیار،ناصر حسین شاہ

بلیک میل ہونگے نہ این آر او دینگے، فیٹف بل ہر صورت منظور کرائیں گے: وزیراعظم

Published On 03 September,2020 07:08 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ حکومت اپوزیشن کی بلیک میلنگ میں آئے گی اور نہ ہی این آر او کی ڈیمانڈ پوری کریں گے۔

تفصیل کے مطابق وزیراعظم عمران خان کے زیر صدارت حکومتی اور اتحادی سینیٹرز کا اجلاس ہوا جس میں وزیر قانون فروغ نسیم نے فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف) سے متعلق قانون سازی پر بریفنگ دی۔

اجلاس کے دوران سینیٹ میں قوانین کی منظوری سے متعلق حکمت عملی پر مشاورت کی گئی۔ ذرائع کے مطابق اس موقع پر اپنی گفتگو میں وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ اپوزیشن نے سینیٹ میں ملکی مفاد کی قانون سازی روک کر ملک دشمنی کی۔

وزیراعظم عمران خان نے واضح اور دوٹوک موقف اختیار کرتے ہوئے کہا کہ حکومت اپوزیشن کی بلیک میلنگ میں نہیں آئے گی۔ ہم نے فیٹف سے متعلق قانون سازی پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس سے ہر صورت منظور کروانی ہے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ اپوزیشن پارلیمنٹ کو اپنی ذاتی مفادات کے لیے استعمال کر رہی ہے۔ اپوزیشن چاہتی ہے کہ ہم فیٹف کی گرے لسٹ سے باہر نہ آ سکیں۔ یہ ملکی مفاد کے قوانین پر بھی سیاست کر رہے ہیں۔

انہوں نے سینیٹرز کو عوامی مفاد کی قانون سازی میں بھرپور حصہ لینے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ بلیک میلنگ میں آئیں گے اور نہ ہی این آر او کی ڈیمانڈ پوری کریں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ فیٹف، پی ٹی آئی کا نہیں بلکہ ملکی مفاد کا معاملہ ہے۔ بل کی منظوری میں رکاوٹ ڈالنے والوں کو ہر فورم پر بے نقاب کریں گے۔ اجلاس کے دوران وزیراعظم نے سینیٹرز کو ایف اے ٹی ایف سے متعلق ضروری ہدایت بھی دیں۔

سینیٹرز نے حکومتی فیصلوں اور وزیراعظم عمران خان کی قیادت پر مکمل اعتماد کا اظہار کیا۔ اجلاس میں ایف اے ٹی ایف بل کی منظوری کیلئے ہر ممکن کوشش پر اتفاق کیا گیا۔