تازہ ترین
  • بریکنگ :- 6 ہزار 277 سیٹوں میں سے 2 ہزار 455 کےنتائج موصول
  • بریکنگ :- پیپلز پارٹی 2 ہزار 288 نشستوں کے ساتھ سرفہرست
  • بریکنگ :- جی ڈی اے کا 65 سیٹوں کے ساتھ دوسرا نمبر
  • بریکنگ :- جے یو آئی 43 سیٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر
  • بریکنگ :- 40 آزاد امیدواربھی کامیاب، پی ٹی آئی کی 13 سیٹیں

لندن: پاکستان ہائی کمیشن کے 10 سے زیادہ اہلکار کورونا وائرس کا شکار

Published On 01 December,2020 08:11 pm

لندن: (دنیا نیوز) برطانوی دارالحکومت لندن میں قائم پاکستان ہائی کمیشن میں کام کرنے والے دس سے زیادہ اہلکار کورونا وائرس کا شکار ہو گئے ہیں۔

تفصیل کے مطابق پاکستان ہائی کمیشن لندن میں کورونا وائرس کی وبا پھیل گئی ہے۔ دس سے زیادہ افسران اور اہلکار مثبت ٹیسٹ آنے پر قرنطینہ کر دیئے گئے ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان ہائی کمیشن لندن میں بڑی تعداد میں اہلکار کورونا کا شکار ہوئے ہیں۔ تازہ ترین کیسز میں دس سے زیادہ افسران اور اہلکاروں کا کورونا ٹیسٹ مثبت آیا ہے۔

کورونا سے متاثرہ افراد میں مختلف شعبوں کے افسران اور ماتحت عملہ کے اہلکار شامل ہیں۔ بڑی تعداد میں کورونا پازیٹو کیسز آنے پر ہائی کمیشن لندن کو مختصر عرصے کیلئے بند کرنے کی تجویز بھی سامنے آئی ہے۔

دنیا نیوز ذرائع کے مطابق ہائی کمیشن میں معمول کے مطابق سٹاف حاضری نے بھی مسائل میں اضافہ کیا ہے۔ دس سے زیادہ افراد کے پازیٹو کیسز آنے کے باوجود ان کے ساتھ رابطے میں رہنے والے دیگر افراد کو چودہ دن کیلئے چھٹی نہیں مل سکی اور پازیٹو کیسز کی تعداد بڑھنے کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے۔

ذرائع کے مطابق برطانوی ہیلتھ اتھارٹیز کی طرف سے بھی ہائی کمیشن کو تمام سٹاف ممبران کے کورونا ٹیسٹ کروانے کا مشورہ دیا گیا ہے۔

پاکستان ہائی کمیشن کے پریس سیکرٹری منیر احمد نے دنیا نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ کورونا پازیٹو کیسز آنے کے بعد عملے کی تعداد میں کمی کرنے کے احکامات جاری کردیئے گئے ہیں جن افراد کے کیسز پازیٹو آئے تھے، ان کے ساتھ کام کرنیوالے افراد کو بھی چھٹی پر بھیج دیا گیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ پروٹوکول ڈیپارٹمنٹ بھی بند کر دیا گیا ہے۔ ہائی کمیشن کے دو کے علاوہ باقی ڈرائیورز بھی سیلف آئیسولیشن میں چلے گئے ہیں۔

منیر احمد کا کہنا ہے کہ عملے کے تحفظ کیلئے اقدامات کئے جا رہے ہیں، اب صرف قونصلر سیکشن میں کم از کم عملے کی تعیناتی کے احکامات جاری کئے گئے ہیں۔