تازہ ترین
  • بریکنگ :- صوبوں کاٹوٹل سرپلس 11 ارب روپےآرہاہے،مفتاح اسماعیل
  • بریکنگ :- شہبازشریف نےعمران خان کویوٹرن لینےپرمجبورکردیا،مفتاح اسماعیل
  • بریکنگ :- حکومت اب بھی میڈیکل الاؤنس پرٹیکس لیتی ہے،مفتاح اسماعیل
  • بریکنگ :- حکومت نےپٹرولیم لیوی 610 ارب روپےرکھی ہے،مفتاح اسماعیل
  • بریکنگ :- ایف بی آرکوگرفتاریوں کی اجازت دینےسےریونیونہیں بڑھےگا،مفتاح اسماعیل
  • بریکنگ :- آپ ایف بی آرکونیب بنانےلگےہیں،یہ نہیں ہوناچاہیئے،مفتاح اسماعیل

یوم مزدور: وزیراعلیٰ عثمان بزدار کا کم از کم اجرت 20 ہزار روپے کرنے کا اعلان

Published On 01 May,2021 09:47 am

لاہور: (دنیا نیوز) وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے یوم مئی پر محنت کشوں کو ریلیف دیتے ہوئے ورکرز کی کم از کم اجرت 20 ہزار روپے کرنے کا اعلان کر دیا۔

وزیراعلیٰ عثمان بزدار کا کہنا تھا کہ محنت کش کی فلاح و بہبود سب سے زیادہ مقدم ہے، پنجاب واحد صوبہ ہے جہاں ورکرز کی کم از کم اجرت 20 ہزار روپے کرنے کی منظوری دی ہے، تحریک انصاف کی حکومت نے 3 برس میں ورکرز کی کم از کم اجرت میں 5 ہزار روپے کا اضافہ کیا ہے۔

عثمان بزدار نے کہا کہ سابق دور میں ورکرز کی فلاح و بہبود پر کوئی توجہ نہیں دی گئی، ماضی کی حکومت نے محنت کشوں کو ریلیف دینے کیلئے کوئی ٹھوس اقدام نہیں اٹھایا، سابق حکمرانوں نے 5 سالہ دور میں ورکرز کی کم از کم اجرت میں صرف 3 ہزار روپے کا اضافہ کیا، ہماری حکومت ورکرز کی کم از کم اجرت میں آئندہ بھی اضافہ کرے گی۔

وزیراعلیٰ پنجاب نے مزید کہا کہ وزیراعظم عمران خان کی قیادت میں فرسودہ نظام ختم کر کے آن لائن لیبر انسپکشن کا نفاذ کیا گیا ہے، سوشل سکیورٹی کنٹری بیوشن کی شفاف اور باسہولت ادائیگی کیلئے  سیلف اسسمنٹ سکیم  کا اجراء کیا گیا ہے، سوشل سکیورٹی ہسپتالوں میں عوام کیلئے مفت ایمرجنسی طبی سہولیات کی فراہمی یقینی بنائی گئی، سوشل سکیورٹی انسپکشن 20 فیصد تک محدود کی گئی ہے، ورکرز کیلئے میرج گرانٹ ایک لاکھ سے بڑھا کر 2 لاکھ جبکہ ڈیتھ گرانٹ 5 لاکھ سے بڑھا کر 6 لاکھ کر دی گئی ہے۔