تازہ ترین
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں 24 گھنٹےکےدوران کوروناسےمزید 17 اموات
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں کوروناسےجاں بحق افرادکی تعداد 28 ہزار 269 ہوگئی
  • بریکنگ :- 24 گھنٹےکےدوران 44 ہزار 831 کوروناٹیسٹ کیےگئے،این سی اوسی
  • بریکنگ :- 24 گھنٹےمیں کوروناکےمزید 720 کیس رپورٹ،این سی اوسی
  • بریکنگ :- ملک میں کورونامثبت کیسزکی شرح 1.60 فیصدرہی،این سی اوسی

کورونا کیسز بڑھنے لگے، صوبہ پنجاب میں سمارٹ لاک ڈاؤن لگانے پر غور شروع کر دیا گیا

Published On 09 July,2021 11:09 pm

لاہور: (ویب ڈیسک) صوبہ پنجاب میں کورونا وائرس کے بڑھتے کیس رپورٹ ہونے کی وجہ سے سمارٹ لاک ڈاؤن لگانے پر غور کیا جا رہا ہے۔

اس بات کا اندیشہ سیکریٹری پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر نے ظاہر کیا ہے۔ سیکرٹری سارہ اسلم کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ عوام نے اگر احتیاطی تدابیر اختیار نہ کیں تو مبجوراً ہمیں سمارٹ لاک ڈاؤن کی جانب پڑ سکتا ہے۔

اس سلسلے میں ہجوم والی جگہوں پر شہریوں کی آمدورفت ختم کرنے کیلئے انھیں دوبارہ بند کر دیا جائے گا۔

انہوں نے خدشات کا اظہار کرتے ہوئے بتایا کہ کچھ دنوں سے مثبت شرح میں اضافہ دیکھا جا رہا ہے۔ کورونا کی چوتھی لہر آ رہی ہے۔

سارہ اسلم نے تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ کورونا کی صورتحال بگڑنے سے پہلے عوام کو چاہیے کہ وہ احتیاط کا دامن ہاتھ سے نہ چھوڑیں۔

ان کا کہنا تھا کہ کورونا وائرس سے بچاؤ صرف بروقت ویکسینیشن ہے۔ تمام کاروباری مراکز اپنے متعلقہ ایس او پیز اور خصوصاً ماسک کو یقینی بنائیں۔